قیام پاکستان کے مقاصد آج بھی تشنہ ہیں،عبدالرحمن سلفی

         قیام پاکستان کے مقاصد آج بھی تشنہ ہیں،عبدالرحمن سلفی

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)امیرجماعت غربااہلحدیث پاکستان ورئیس جامعہ ستاریہ الاسلامیہ مولاناحافظ عبدالرحمن سلفی نے کہاہے کہ قیام پاکستان کے مقاصد آج بھی تشنہ ہیں تحریک پاکستان  میں لاکھوں مسلمانوں کی قربانیوں سے آزادی کی نعمت ہمیں حاصل ہوء لیکن یہاں 73 سال بعدبھی غیرملکی استعمارکے قوانین  نافذالعمل ہیں انگریزوں کے قوانین کے بجائے اسلامی قوانین کے نفاذ کی منزل تاہنوز نہیں آئی وہ مرکزاہلحدیث برنس روڈپر آزادی کی نعمت اوراسلامی نظام کے موضوع پر خصوصی خطاب کرہے تھے مولاناعبدالرحمن سلفی نے یوم کے حوالے سے مزید کہاکہ  آزادی  جشن، وعظ وپیغامات تک محدود ہے جبکہ حقیقی  آزادی کا سورج اس وقت طلوع ہوسکتاہے  جب یہاں  وعدہ مطابق اسلام  کے قوانین عدل وانصاف  ومساوات  پر مبنی  قوانین نافذ ہوں  انہوں نے کہا مسلسل ملک  تنزلی کیجانب گامزن ہے  مہنگاء،کرپشن، ظلم وناانصافی، بے حیاء وفحاشیواور زرائع ابلاغ میں اسلامی تعلیمات کے منافی  ڈرامے  مسجد میں ناچ گانوں کوفلمانے جیسے شرمناک  واقعات  رونما ہورہے ھیں  حکومت کو چاہیے کہ وہ ان مسائل  پر نوٹس لے اور عوام کو مسائل کے حل سے نجات  دلانے کیلیے قرارداد مقاصد کے حوالے سیاپناکردار ادا کرے اوریہاں  اسلامی تعلیمات  کے مطابق  قوانین کی اصلاح کریے تاکہ  ہم حقیقی آزادی حاصل کرسکیں 

مزید :

صفحہ آخر -