پشاور ہاؤسنگ سکیم کیلئے نیسپاک کی خدمات حاصل 

پشاور ہاؤسنگ سکیم کیلئے نیسپاک کی خدمات حاصل 

  

لاہور(این این آئی)  پاکستان ہاؤسنگ اتھارٹی فاؤنڈیشن نے سری زئی پشاور میں ہاؤسنگ سکیم کے قیام کے لیے نیسپاک کی انجینئرنگ کنسلٹنسی کی خدمات حاصل کر لی ہیں۔ یہ بات نیسپاک کے منیجنگ ڈائریکٹر ڈاکٹر طاہر مسعود نے بتائی۔اس منصوبے کی تخمینہ لاگت 100 بلین روپے ہے اور یہ 8500 کنال کے رقبے میں پھیلی ہوئی ہے۔ نیسپاک کے مشاورتی کام کے دائرہ کار میں تفصیلی سروے، پی سی ون کی تیاری کے ساتھ فزیبلٹی اسٹڈی، ماسٹر پلاننگ، انفراسٹرکچر ڈیزائن، مکانات، اپارٹمنٹس، تجارتی اور عوامی سہولیات کی تفصیلی ڈیزائننگ، لاگت سمیت تفصیلی ٹینڈر دستاویزات کی تیاری شامل ہیں۔ تخمینے،بی او کیوزاور تکنیکی وضاحتیں، تعمیر، تعمیری ڈرائنگ کی تیاری، بولی کی جانچ اور اعلی تعمیراتی نگرانی کے لیے کلائنٹ کی مدد شامل ہیں۔ چیف انجینئر  نیسپاک اسلام آباد سلمان شاہد کو پراجیکٹ منیجر مقرر کیا گیا ہے۔دریں اثنا، خیبرپختونخواہ میں پاکستان ڈیجیٹل سٹی ہری پور کے لئے مشاورتی خدمات فراہم کرنے کے لئے خیبرپختونخوا انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ نے نیسپاک کا انتخاب کیا گیاہے۔ نیسپاک کے کام کے دائرہ کار میں ماسٹر پلاننگ، انفراسٹرکچر ڈیزائن کی تیاری اور ایک عمارت کا ڈیزائن شامل ہے جو پچاس ہزار مربع فٹ کے رقبے پر محیط ہوگی۔

 اور ہری پور میں تقریباً 86 کنال کا رقبہ اس منصوبے کے لیے مختص کیا گیا ہے۔ اس منصوبے کی کل لاگت تقریبا 406 ملین روپے ہے۔

مزید :

کامرس -