خورشید شاہ پر فرد جرم عائد نہ ہو سکی سماعت 24 اگست تک ملتوی

         خورشید شاہ پر فرد جرم عائد نہ ہو سکی سماعت 24 اگست تک ملتوی

  

 سکھر(آئی این پی) پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنما خورشید شاہ کی احتساب عدالت میں پیشی، ریفرنس میں نامزد خورشید شاہ کی بیگم طلعت بی بی کی غیرموجودگی کی وجہ سے عدالت فرد جرم عائد نہ کرسکی، اور سماعت 24 اگست تک ملتوی کردی گئی۔خورشید شاہ کی جانب سے وکیل مکیش کمار کارڑا اور نیب کی جانب سے پراسیکیوٹر ملک زبیراحمد پیش ہوئے، وکلا کے مطابق خورشید شاہ و دیگر کے خلاف   عدالت میں  فرد جرم عائد ہونا تھی مگر خورشید شاہ کی بیگم طلعت بی بی کی عدم موجودگی کی وجہ سے فرد جرم عائد نہ ہو سکی۔ جج نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ کیوں نہ ملزمہ کی غیرموجودگی میں ہی فرد جرم عائد کیا جائے؟ جس پر خورشید شاہ کے وکیل نے تاریخ کی استدعا کی جس پر سماعت آئندہ 24 اگست تک ملتوی کردی گئی۔ یاد رہے خورشید شاہ کو پچھلے سال 18 ستمبر کو بنی گالا سے گرفتار کیا گیا تھا، نیب کی جانب سے خورشید شاہ، دو بیگمات، دو بیٹوں اور داماد صوبائی وزیر اویس شاہ سمیت 18 افراد کے خلاف ایک ارب 23 کروڑ روپے سے زائد کرپشن کا ریفرنس زیر سماعت ہے۔

  خورشید شاہ 

مزید :

صفحہ اول -