کو ٹ ادو،ساس کا بیٹے سے ملکر بہو پر وحشیانہ تشدد 

      کو ٹ ادو،ساس کا بیٹے سے ملکر بہو پر وحشیانہ تشدد 

  

 کوٹ ادو(تحصیل رپورٹر) نرینہ اولاد پیدا نہ کرنے پر ساس نے بیٹے سے ملکر بہو  کوڈنڈوں سوٹوں سے تشدد،کا نشانہ بنایا تشدد،کپڑے پھاڑ کر برہنہ کردیا،تشدد سے ہاتھ(بقیہ نمبر67صفحہ7پر)

 کی انگلیاں،دانت توڑ دیے،اہل علاقہ نے مداخلت کرکے خاتون کی جان بخشی کرائی،متاثرہ ساس اور دیور کے خلاف تھانہ پہنچ گئی،میڈیکل کے بعد ساس اور دیور کے خلاف مقدمہ درج،اس بارے تفصیل کے مطابق تھانہ کوٹ ادو کے علاقہ موضع منہاں میں انسانیت سوز واقعہ پیش آیا ہے، بیٹے پیدا نہ کرنے پر ساس نے بیٹے سے ملکر بہو پر وحشیانہ تشدد کیا،موضع شادی خان منڈا کے رہائشی شیراز گرمانی کی شادی بشریٰ بی بی سے ہوئی تھی جس سے بشریٰ بی بی کی 3بیٹیاں تھیں،شوہر شیراز گورمانی بیٹا پیدا نہ کرنے پر اکثر اوقات اپنی بیوی سے لڑتا جھگڑتا تھا،گزشتہ روز 6بجے شام بشریٰ بی بی گھر میں موجود تھی کہ اسی اثناء میں بشریٰ بی بی کی ساس کنیز بی بی نے بہو بشریٰ کو بیٹا پیدا نہ کرنے کا طعنہ دیا،بشریٰ بی بی کے جواب دینے پر کنیز بی بی نے اپنی بیٹے فیاض گرمانی کے ہمراہ اس کو قابوکرلیا،خوب تشدد  کے بعد اسے بالوں سے گھسیٹ کر گھر کے باہر روڈ پر لے گئے اورروڈ پر گھسیٹتے رہے، گلہ دبا کر اسے مارنے کی کوشش کی،بشریٰ بی بی کے کپڑے پھاڑ کر اسے نیم برہنہ کردیا،تشدد سے بشریٰ بی بی کے ہاتھ کا انگوٹھا دانت بھی ٹوٹ گئے جبکہ چہرہ پر تشدد سے اس کے ہونٹ بھی پھٹ گئے،شور پر بشریٰ بی بی کے چلانے پر اہل علاقہ آگئے جنہوں نے مداخلت کرکے بشریٰ بی بی کی جان بخشی کرائی،متاثرہ بشریٰ بی بی ساس کنیز بی بی اور دیور فیاض گرمانی کے خلاف تھانہ کوٹ ادو پہنچ گئی،پولیس کوٹ ادو نے متاثرہ بشریٰ بی بی کا میڈیکل کرانے کے بعد اس کی مدعیت میں مقدمہ نمبر435/20زیر دفعہ 337وی،337آئی،337اے،34کے تحت درج کرکے ملزمان کی تلاش شروع کردی ہے،

تشدد

مزید :

ملتان صفحہ آخر -