وزیر اعظم آج وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا کے ہمراہ بی آر ٹی پشاور کا افتتاح کریں گے

 وزیر اعظم آج وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا کے ہمراہ بی آر ٹی پشاور کا افتتاح ...

  

پشاور (سٹاف رپورٹر) وزیر اعظم عمران خان آج وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان کے ہمراہ بی آر ٹی پشاور کا  باقاعدہ افتتاح کریں گے، اس سلسلے میں ایک تقریب بھی منعقد کی جا رہی ہے، جس میں وزیر اعظم بطور مہمان خصوصی شریک ہوں گے جبکہ صوبائی کابینہ اور کے پی کے اسمبلی کے اراکین سمیت دیگر اکابرین کو بھی مدعو کیا گیا ہے۔ اس منصوبے کا آغاز پی ٹی آئی کے گزشتہ دور حکومت کے دوران اکتوبر 2017 میں ہوا تھا،جب پرویز خٹک خیبر کے وزیر اعلیٰ تھے۔ منصوبے میں مختلف مقامات پر 31 اسٹیشن بنائے گئے ہیں، آٹھ انڈر پاسز ہیں جن کی کل لمبائی تین کلو میٹر ہے۔بی آر ٹی میں 13 کلومیٹر کے اوور ہیڈ ہیں جن میں نو اسٹیشن اوور ہیڈ بنائے گئے ہیں، منصوبے کی مجموعی لمبائی 65 کلو میٹر ہے۔ بی آر ٹی میں سفر کرنے والے شہریوں کے لیے گزشتہ روز ”زو کارڈ“ (سفری اجازت نامہ) بھی جاری کیا گیا۔اس میگا پراجیکٹ کے حوالے سے ”پاکستان“ سے گفتگو کرتے ہوئے خیبرپختونخوا کے وزیر محنت و ثقافت شوکت یوسفزئی کا کہنا ہے کہ وزیر اعلیٰ محمود خان نے کووڈ 19 کے باوجود بی آر ٹی پر کام کرایا اور دن رات اس میگا پراجیکٹ کی خود نگرانی بھی کی، یہ ایک بڑا منصوبہ ہے جو شفافیت کے ساتھ مکمل ہو گیا ہے‘ میں وثوق سے کہتا ہوں کہ اس میں کوئی کرپشن نہیں ہوئی، کوئی مائی کا لال بھی  اس منصوبے میں کرپشن ثابت کر دے تو میں سیاست چھوڑ دوں گا۔ اپوزیشن کے پاس اگر کوئی ثبوت ہے تو سامنے لائے‘ وزیراعلی محمود خان بار ہا کہہ چکے ہیں کہ وہ خود کرپشن میں ملوث افراد کو سزا دینگے۔ صوبائی وزیر نے گزشتہ روز معاملات کا جائزہ لینے کے لئے بی آر ٹی کے مرکزی کنٹرول روم کا دورہ بھی کیا جہاں سے پورے بی آر ٹی کی نگرانی ہو گی اور سیکیورٹی کا جائزہ لیا جائے گا۔ صوبائی وزیر کا اس حوالے سے موقف ہے کہ میں کئی بار یہ چیلنج کر چکا ہوں کہ ہم نے پشاور میٹرو منصوبہ پنجاب میٹرو بس سروس کے مقابلے میں کم لاگت سے مکمل کیا ہے، ہمارا سفری ٹریک بھی اس کی نسبت کہیں زیادہ بڑا ہے، جہاں تک تکمیل کی مدت کا تعلق ہے تو اس میں تاخیر کی کئی وجوہات ہیں۔

 وزیر اعظم

مزید :

صفحہ اول -