پون صدی بعد بھی پاکستان حقیقی منزل سے دور ہے، سراج الحق

پون صدی بعد بھی پاکستان حقیقی منزل سے دور ہے، سراج الحق
پون صدی بعد بھی پاکستان حقیقی منزل سے دور ہے، سراج الحق

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کہاہے کہ پون صدی بعد بھی پاکستان حقیقی منزل سے دور ہے۔جاگیرداروں، وڈیروں اور ظالم سرمایہ داروں نے سازش کے تحت کروڑوں مسلمانوں کی قربانیوں کو رائیگاں کیا۔ ملک میں پارلیمنٹ، عدلیہ، الیکشن کمیشن آزاد نہیں، معیشت آئی ایم ایف کے قبضے میں ہے۔ جمہوریت کی بات کرنے والی نام نہاد سیاسی جماعتیں خود جمہوریت کے تصور سے ناآشنا، فیملیز اور وڈیروں کے کلبز ہیں۔ آئین پاکستان سے کھلواڑ اور ملک کی نظریاتی اساس پر حملے ہوتے ہیں۔ ملک کی شہ رگ کشمیر دشمن کے قبضہ میں ہے۔ آئیے یوم آزادی کے موقع پر حقیقی آزادی کے حصول کے لیے بھرپور جدوجہد کا آغاز کریں۔ان خیالات کا اظہار انھوں نے جماعت اسلامی پنجاب وسطی کی شوریٰ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ امیر جماعت اسلامی پنجاب وسطی جاوید قصوری اور جنرل سیکرٹری پنجاب وسطی نصراللہ گورائیہ بھی اس موقع پر موجود تھے۔

انہوں نے کہا کہ حکمران جماعتیں اپنے مفادات کے لیے عوام کو لڑا رہی ہیں، پولرائزیشن خطرناک صورت حال اختیار کر چکی۔ قوم میں اتحاد و اتفاق وقت کی ضرورت ہے۔ آئین وقانون کی بالادستی قائم کرنا ہو گی، آئین پاکستان مقدم دستاویز ہے جس پر سب کو اس پر اتفاق کرنا چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کو سود سے پاک معیشت اور اسلامی نظام چاہیے۔ جماعت اسلامی کی جدوجہد اسلامی انقلاب کے لیے ہے، کارکنان قیام پاکستان کے حقیقی پیغام کو گھر گھر عام کریں۔ یقین ہے کہ ملک کا مستقبل روشن ہے، پاکستان قیامت کی صبح تک قائم رہے گا۔ 

مزید :

قومی -