چہلم شہدائے کربلا، ملک بھر سے جلوس برآمد ہونا شروع، سیکیورٹی ہائی الرٹ

چہلم شہدائے کربلا، ملک بھر سے جلوس برآمد ہونا شروع، سیکیورٹی ہائی الرٹ
چہلم شہدائے کربلا، ملک بھر سے جلوس برآمد ہونا شروع، سیکیورٹی ہائی الرٹ

  


اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)  ملک بھر میں چہلم شہدائے کربلا مذہبی عقیدت و احترام کے ساتھ منایا جارہا ہے اور ملک کے مختلف شہروں میں مجالس منعقد کی جار ہی ہیں جب کہ شہدا کی عظیم قربانی کو خراج عقیدت پیش کرنے کے لئے مختلف شہروں سے جلوس نکالے جا رہے ہیں، جلوس کے موقع پر عزاداران سینہ کوبی اور زنجیر زنی کر رہے ہیں،اس موقع پر کسی بھی نا خوشگوار واقعے سے نمٹنے کے لئے سیکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کئے گئے ہیں۔ 

تفصیلات کے مطابق   کراچی میں حضرت امام حسینؑ اور ان کے جانثار ساتھیوں کو خراج عقیدت پیش کرنے کے لئے جلوس نشتر پارک سے برآمد ہوا جس کے شرکاءایم اے جناح روڈ پر واقع امام بارگاہ علی رضا کے سامنے نماز ظہرین ادا کریں گے اور پھر یہ جلوس مختلف راستوں سے ہوتا ہوا امام بارگاہ حسینیہ ایرانیاں کھارادر پر اختتام پزیر ہوگا۔ جلوس کی سیکیورٹی کے لئے 6 ہزار پولیس اہلکار اور رینجرز کو بھی تعینات کیا گیا ہے، حساس مقامات پر بلند عمارتوں پر 200 اہلکاروں کو تعینات کیا گیا ہے جب کہ پولیس کے کمانڈ اینڈ کنٹرول سسٹم سے بھی جلوس کی نگرانی کی جا رہی ہے جبکہ رات بارہ بجے موٹرسائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد ہے۔

  لاہور میں چہلم شہدائے کربلا کا مرکزی جلوس الف شاہ حویلی سے جب کہ راولپنڈی میں امام بارگاہ یادگار حسین اور کوئٹہ میں علمدار روڈ سے برآمد ہوا جو مختلف راستوں سے ہوتے ہوئے اپنے اپنے مقام پر اختتام پزیز ہوں گے جبکہ جلوس کے راستوں پر موبائل فون سروس معطل رہے گی ۔ راولپنڈی میں جلوس کے دوران کسی بھی نا خوشگوار واقعے سے نمٹنے لے لئے 6 ہزار پولیس اہلکاروں اور رینجرز کی 2 کمپنیوں کو تعینات کیاگیا ہے جب کہ فوج کو بھی اسٹینڈ بائی پر رکھا گیا ہے۔

کوئٹہ میں شہدائے کربلا کے چہلم کا مرکزی جلوس امام شہدا چوک سے برآمد ہو کر بہشت زینت پر اختتام پزیر ہوگا اس حوالے سے سیکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے ہیں اور جلوس کے راستوں کی سراغ رساں کتوں کے ذریعے نگرانی بھی کی جا رہی ہے، اس کے علاوہ ڈبل سواری پر بھی پابندی عائد ہے۔  سرگودھا میں بھی ماتمی جلوس کے حوالے سے سخت سیکیورٹی انتظامات کئے گئے ہیں، جلوسوں کی حفاظت کے لئے ضلع بھر میں 15 سو اہلکاروں کو تعینات کیا گیا ہے جبکہ موٹرسائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد ہے۔ 

اس کے علاوہ بھکر ، نارروال، جہلم، سیالکوٹ، گوجرانوالہ، میانوالی، پشاور، بنوں اور کوہاٹ سے بھی چہلم کے جلوس نکالے جا رہے ہیں، نواب شاہ میں مرکزی جلوس امام بارگاہ موہنی بازار سے برآمد ہوا جب کہ سانگھڑ، مٹھی، جاتی، ٹھٹھہ، دوڑ سمیت دیگر علاقوں سے بھی ماتمی جلوس نکالے جا رہے ہیں۔

مزید : قومی /اہم خبریں


loading...