سرکاری محکموں کی پرکشش سیٹوں پر قبضہ ،سینکڑوں ملازمین 3برس سے زائد بغیر تبادلہ ایک ہی پوسٹ پر تعینات

سرکاری محکموں کی پرکشش سیٹوں پر قبضہ ،سینکڑوں ملازمین 3برس سے زائد بغیر ...

  

لاہور( نیوز رپورٹر)صوبے کے مختلف سرکاری اداروں میں حکومتی احکامات اور قواعد وضوابط کے برعکس سینکڑوں چھوٹے بڑے ملازمین کو ایک ہی جگہ تعینات کئے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔ایس اینڈ جی اے ڈی ، سول سیکرٹریٹ ،سی اینڈ ڈبلیو، اریگیشن ،ایکسائز اینڈٹیکسیشن ، لوکل گورنمنٹ اینڈ کمیونٹی ڈویلپمنٹ ، ضلعی حکومت اور دیگر اداروں میں پرکشش عہدوں پر تعینات اہلکار رشوت اور سفارش کے زور پر تین برسوں کے بعد بھی تعینات رہتے ہیں۔معلوم ہواہے کہ صوبے میں سرکاری ملازمین کو زیادہ سے زیادہ تین برس تک کسی ایک پوسٹ پر تعینات نہیں کیا جاسکتا ہے۔ لیکن عملی طورپر صورتحال مختلف ہے۔ اور سول سیکرٹریٹ کے علاوہ مختلف سرکاری اداروں ایس اینڈ جی اے ڈی ،سی اینڈ ڈبلیو، اریگیشن ،ایکسائز اینڈٹیکسیشن ، لوکل گورنمنٹ اینڈ کمیونٹی ڈویلپمنٹ ، ضلعی حکومت اور دیگر اداروں میں ایسے سینکڑوں چھوٹے بڑے ملازمین ہیں جو تین برسوں کے بجائے عرصہ دراز سے پرکشش سیٹوں پر تعینات ہیں۔ حکومتیں بدلیں، سیکرٹری و ڈی جی تبدیل ہو ئے لیکن ایسے اہلکار اپنی سیٹوں پر براجمان رہے۔ذرائع کے مطابق ایس اینڈجی اے ڈی کے پول پر سینکڑوں ایسے ملازمین ہیں جو محکمہ مواصلات وتعمیرات اور آبپاشی میں چھوٹے بڑے عہدوں پر برسوں سے تعینات ہیں۔یہ اہلکار پرکشش عہدوں پر تعینات ہیں۔ اور ٹرانسفر نہیں کئے جاتے اوراگر انہیں ٹرانسفر کیا بھی جائے تو دو یا تین ماہ کے بعد واپس آجاتے ہیں۔ضلعی حکومت کے ماتحت مختلف ایگزیکٹو ڈسٹرکٹ افسروں کے دفاتر،کچہریوں ، ایل ڈی اے ،واسا ، لوکل گورنمنٹ اینڈ کمیونٹی ڈویلپمنٹ ، سول سیکرٹریٹ اور دیگر اداروں کے مختلف شعبوں میں کام کرنے والے بہت سے ملازمین ایسے ہیں۔ جو تین برس گزرنے کے بعد بھی ایک ہی عہدے یا سیٹ پر کام کررہے ہیں۔

مزید :

علاقائی -