صوبہ بھر کے ملازمین کا کل مظاہروں اور جلسوں کا اعلان

صوبہ بھر کے ملازمین کا کل مظاہروں اور جلسوں کا اعلان

  

صوبی( بیوررپورٹ ) صوبہ بھر کے بلدیاتی ملازمین نے کل سوموار14 دسمبر کو مکمل ہڑتال اور احتجاجی جلسوں کا اعلان کردیا ۔ نااہل صوبائی وزیر بلدیات عنایت اللہ اور صوبائی وزیر خزانہ مظفر سید فورا مستعفی ہوجائے ۔ٹی ایم اے ٹانک کے ملازم محمد ہاشم کا خون صوبائی حکمرانوں کے سر ہے۔انصاف اور اسلام کے نام پر حکمرانی کرنے والی حکومت ناکا، ہوچکی ہے ۔ گزشتہ پانچ مہینوں سے تنخواہ نہ ملنے کی وجہ سے خود کشی کرنے والے ملازم محمد ہاشم کے موت پر صوبہ بھر کے بلدیاتی ملازمین میں غم و غُصے کی لہر دوڑ گئی۔ان خیالات کا اظہار لوکل گورنمنٹ ایمپلائز فیڈریشن (رجسٹرڈ)صوبہ خیبر پختونخواہ کے صدر حاجی انور کمال۔جنرل سیکرٹری شاد خان۔حاجی اقبال حسین ۔ شوکت علی انجم ،شوکت علی کیانی اورعبدالستار خان نے ایک مشترکہ اخباری بیان کے ذریعے کرتے ہوئے کہا۔اُنہوں نے اس امر پر افسوس کا اظہار کیا ۔کہ گزشتہ کئی مہینوں سے بیشتر بلدیاتی اداروں کے ملازمین کے تنخواہوں کی عدم ادائیگی کیوجہ سے بلدیاتی ملازمین سراپا احتجاج ہے۔لیکن اقتدار کے نشے میں مست انصاف اور اسلام کے نام نہاد دعویدار کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگتی ۔اس لئے حالات سے لڑتے لڑتے مایوس ہوکر TMA ٹانک کے ملازم اور یونین عہدیدار محمد ہاشم نے خودکشی کر کے حکمرانوں کے نعروں اور دعوؤں کی نفی کر دی۔اسلئے محمد ہاشم کے قتل کا مقدمہ حکمرانوں کے خلاف کاٹی جائے۔اور صوبہ بھر کے بلدیاتی ملازمین 15دسمبر پیر کومکمل ہڑتال کرکے اپنے دفاتر میں احتجاجی جلسوں کا انعقاد کرکے اپنے دفاتر پر کالی جھنڈیاں اور احتجاجی بینر زاویزاں کرکے احتجاجی مظاہرے کریں ۔فیڈریشن رہنماؤں نے صوبائی وزیر بلدیات عنایت اللہ خان اور صوبائی وزیر خزانہ مظفر سید سے فی الفور مستعفی ہونے کا پُرزور مطالبہ کیا۔#

مزید :

پشاورصفحہ اول -