علمائے کرام محراب و منبر کے ساتھ سیاست بھی کریں، حافظ حسین احمد

علمائے کرام محراب و منبر کے ساتھ سیاست بھی کریں، حافظ حسین احمد

  

بہاول پور،(بیورورپورٹ، نمائندہ پاکستان) ن لیگ سے حکومتی اتحادہے انتخابی اتحاد نہیں ہماراامیدوار ’’کرپٹ ترین‘‘نہیں بلکہ بہترین ہے بلوچ سے زیادہ اچھی سوچ کامالک ہے ان خیالات کااظہار سابق سینیٹر اورجمعیت علماء اسلام کے سربراہ مرکزی میڈیاسیل حافظ حسین احمدنے این اے(بقیہ نمبر26صفحہ12پر )

154 لودھراں سے جے یوآئی کے امیدوار علامہ شفقت الرحمان کی انتخابی مہم کے سلسلہ میں جلہ ارائیں لودھراں میں کارنرمیٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہاکہ اگرمیاں برادران اپناامیدوار سامنے لاتے ہم ضرور انکی درخواست پرغور کرتے مگریہاں تبدیلی آنہیں رہی بلکہ آچکی ہے ۔جیسی ہے انہوں نے کہاکہ عدالت نے واضح کردیاہے کہ وہ صدیق توہیں مگرصادق نہیں ہیں ۔ جے یوآئی خم ٹھوک کر میدان میں آئی ہے اورپیچھے ہٹنے کاسوال ہی پیدا نہیں ہوتا اس موقع پر این اے 154 لودھراں میں جے یوآئی کے کوارڈینیٹر ڈاکٹرمحمدعارف ‘ امیدوار این اے 154 لودھراں علامہ شفقت الرحمان ‘ضلعی امیرجے یوآئی لودھراں مولاناسعیداحمدشاہ کاظمی‘ مولانامفتی عبدالصمد‘ ودیگرنے بھی خطاب کیا اس موقع پر مولاناشیخ عبدالرحمان ‘ مولاناعبدالشکور‘ مولاناخلیل احمد‘ مولاناقاری محمدنواز‘ مولانایوسف جمیل‘ مولاناغلام مرتضی عثمانی‘ مولانامحمدشفیق اورمولاناعبدالعزیز بھی موجودتھے ۔ جمعیت علمائے اسلام (ف)کے جنرل سیکرٹری حافظ حسین احمد نے کہا ہے کہ علمائے کرام مساجداورمدارس میں خدمات انجام دینے کے ساتھ ساتھ سیاست میں بھی حصہ لیں تاکہ اچھے اوربرے کا امتیاز ہوسکے انہوں نے کہا کہ دورہ لودھراں کے دوران بھرپورپذیرائی ملی وہاں کے لوگوں سے ملنے والی محبت ناقابل فراموش ہے حلقہ این اے154لودھراں کے ضمنی الیکشن میں ہماراامیدوار علامہ شفقت الرحمٰن عوامی حمائت سے بھاری اکثریت سے کامیاب ہوگا ان خیالات کا اظہار انہوں نے جے یو آئی کی جاریکردہ پریس ریلیز میں کیا۔ اس موقع پر مولانا فضل الرحمٰن نقشبندی۔ ملک عبدالجبار ۔ملک محمدانور۔قاری محفوظ احمدقاسمی۔قاری محمد اقبال۔ اورمولاناحبیب الرضمٰن بھی موجودتھے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -