بھارت کے دارالحکومت میں 7برس کی معصوم بچی اجتماعی جنسی درندگی کا نشانہ بن گئی، رشتہ دار نوجوان گرفتار ، دو مفرور

بھارت کے دارالحکومت میں 7برس کی معصوم بچی اجتماعی جنسی درندگی کا نشانہ بن ...
بھارت کے دارالحکومت میں 7برس کی معصوم بچی اجتماعی جنسی درندگی کا نشانہ بن گئی، رشتہ دار نوجوان گرفتار ، دو مفرور

  

نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک )بھارت کے دنیا کی سب سے بڑی جمہوریت ہونے کے دعوے کئے جاتے ہیں لیکن وہاں جمہور خصوصاََ اقلیتوں اور نچلی ذات کے ہندوﺅں کو بنیادی حقوق تو کیا خاک میسر ہیں الٹا ظلم و بربریت کا نشانہ بنتے ہیں، نہ صرف خواتین کی عزتیں محفوظ نہیں بلکہ کم سن بچیوں کو بھی اجتماعی جنسی درندگی کا نشانہ بنایا جا نا معمول ہے ۔ بھارت میں خواتین سے شرمناک سلوک کی مثالوں کےلئے دہلی بس گینگ ریپ بدترین مثال ہے اس کے علاوہ بھی وہاں پے در پے شرمناک واقعات رونما ہوتے رہتے ہیں ۔

تازہ واقعہ میں بھارت کے دارالحکومت نئی دہلی میں محض 7برس کی معصوم بچی کو اجتماعی جنسی درندگی کا نشانہ بنایا دیا گیا ہے ۔ المناک واقعہ گذشتہ روز نئی دہلی کے علاقے تیگڑی میں گذشتہ روز شام کے وقت پیش آیا ہے جہاں تین افراد نے کم سن بچی سے اجتماعی زیادتی کی ۔پولیس کے مطابق کم سن بچی سے زیادتی کے مرکزی ملزم سولہ سالہ نابالغ لڑکے کو گرفتار کر کے جوڈیشل مجسٹریٹ کے سامنے پیش کر دیا گیا ہے ۔ بتایا گیا ہے کہ یہ لڑکا زیادتی کی شکار بچی کاکوئی رشتہ دار ہے اور اسی علاقہ میں رہتا ہے ۔تاہم دوسرے دو افراد تاحال مفرورہیں۔

انڈیا کے این ڈی ٹی وی کے مطابق لڑکی جماعت اول کی طالبہ ہے جسے درندہ صفت ملزمان نے اس کے گھر سے ملحقہ پارک سے گذشتہ شام کوئی ساڑھے بجے اغواءکیا اور تیگڑی کے ہی قریبی دوسرے پارک میں لے گئے جہاں اسے اپنی ہوس کا نشانہ بنایا اور تشویشناک حالت میں چھوڑ کر بھاگ گئے ۔ بعد ازاں بچی کے ہمسایوں نے اسے تشویشناک حالت میں پایا تو فوری اس کے اہل خانہ کو اطلاع کر دی ۔لڑکی کو علاج کے لئے ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے تاہم اس کی حالت تاحال تشویشناک بتائی جا رہی ہے ۔ متاثرہ خاندان کاپولیس کے دعویٰ کے برعکس کہنا ہے کہ انہوں نے مقامی پولیس سٹیشن میں مقدمہ درج کر وادیا ہے تاہم پولیس نے کوئی جواب نہیں دیا ۔ مقامی افراد کا کہنا ہے کہ لڑکی کو تین افراد نے زیادتی کا نشانہ بنایا گیا ہے تاہم سینئر پولیس حکام نے اس دعوے کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ جیسے ہی ہمیں شکایت موصول ہوئی ہم نے فوری طور پر تحقیقات شروع کر دی تھیں جبکہ واقعہ میں صرف ایک ملزم ملوث ہے ۔

یاد رہے کہ یہ محض بھارت کے دارالحکومت میں دو روز میں اجتماعی زیادتی کا دوسرا واقعہ ہے ۔ جمعہ کے روز بھی ایک چودہ برس کی کم سن بچی کو 6افراد نے اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا دیا تھا ۔جنسی درندگی کا یہ واقعہ دہلی کے جنوب مشرق کے قریب نجف گڑھ کے علاقے میں پیش آیا تھا ۔

مزید :

بین الاقوامی -