پانی کے معاملے پر پاک بھارت تنازع جاری رہنے سے انڈس واٹر ٹریٹی غیر فعال ہو سکتی ہے :عالمی بینک

پانی کے معاملے پر پاک بھارت تنازع جاری رہنے سے انڈس واٹر ٹریٹی غیر فعال ہو ...
پانی کے معاملے پر پاک بھارت تنازع جاری رہنے سے انڈس واٹر ٹریٹی غیر فعال ہو سکتی ہے :عالمی بینک

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )عالمی بینک نے عندیہ دیا ہے کہ پانی کے معاملے پر پاک بھارت تنازع جاری رہنے سے انڈس واٹر ٹریٹی غیر فعال ہو سکتی ہے۔عالمی بینک نے انڈس واٹر ٹریٹی معاملے پر غیر جانبدار ماہر کی تقرری اور چیئر مین ثالثی عدالت کی تقرری پر عملد رآمد روک دیا ۔نجی نیوز چینل جیو نیوز کے مطابق عالمی بینک کے اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ عارضی اقدامات انڈس واٹر ٹریٹی کے تحفظ کے لیے کیے ہیں۔

بھارت نے ایک ایسے ہمسائے کے ساتھ نیوکلیئر معاہدہ کرلیا کہ سن کر امریکہ کو سانپ سونگھ گیا

عالمی بینک کے صدر کا کہنا ہے کہ پاکستان اور بھارت کو انڈس واٹر ٹریٹی کے تحت متنازع معاملات کے پر امن حل کا موقع دینا ہے،امید ہے پاکستان بھارت انڈس واٹر ٹریٹی معاملے پر جنوری تک متفق ہو جائیں گے ۔انہوں نے کہا کہ امید ہے پاکستان اور بھارت انڈس واٹر ٹریٹی معاملے پر جنوری تک متفق ہو جائیں گے ،تنازع جاری رہنے سے انڈس واٹر ٹریٹی غیر فعال ہو سکتی ہے ۔انڈ س واٹر ٹریٹی پر عارضی تعطل سے متعلق خطوط پاکستان بھار ت کے وزرائے خارجہ کو ارسال کر د ئیے گئے ۔واضح رہے کہ ورلڈ بینک کی جانب سے 12دسمبر تک انڈس واٹر ٹریٹی پر غیر جانبدار ماہر کی تقرری متوقع تھی ۔بھارت انڈس واٹر ریور سسٹم پر دو متنازع ڈیم تعمیر کر رہا ہے جس نے انڈس واٹر ٹریٹی کے معاملے پر عارضی ماہر کی تقرری کی درخواست کی تھی ۔دوسری جانب چیئر مین ثالثی عدالت کی تقرری کی پاکستان کی درخواست پر عمل در آمد بھی رک گیا ۔

مزید : قومی /اہم خبریں