خواتین کی جیلوں کی حالت زار کیس، سپریم کورٹ کی وفاقی محتسب کی کارکردگی کی تعریف، جیلوں کی بہتری کیلئے صوبائی حکومتوں سے تجاویز طلب

خواتین کی جیلوں کی حالت زار کیس، سپریم کورٹ کی وفاقی محتسب کی کارکردگی کی ...
خواتین کی جیلوں کی حالت زار کیس، سپریم کورٹ کی وفاقی محتسب کی کارکردگی کی تعریف، جیلوں کی بہتری کیلئے صوبائی حکومتوں سے تجاویز طلب

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) سپریم کورٹ نے خواتین کی جیلوں کی حالت زار سے متعلق وفاقی محتسب کی رپورٹس پر تمام صوبائی حکومتوں سے تجاویز طلب کرتے ہوئے سماعت جنوری کے دوسرے ہفتے تک ملتوی کر دی ہے۔ چیف جسٹس نے وفاقی محتسب کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے کہا کہ کچھ ادارے اور لوگ کام کر رہے ہیں۔

بغیر پردے کے سعودی عرب میں تصویر کھنچوانے والی یہ لڑکی تو آپ کو یاد ہو گی ،اب یہ کدھر ہے اور حکومت اس کے ساتھ کیا کرنے جا رہی ہے ،سن کر آپ ہی کانپ اٹھیں گے

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس آف پاکستان انور ظہیر جمالی کی سربراہی میں 3 رکنی بینچ نے خواتین کی جیلوں کی حالت زار سے متعلق ازخود نوٹس کی سماعت کی جس دوران چیف جسٹس نے وفاقی محتسب کی کارکردگی کو سراہا اور کہا کہ ملک کے کچھ ادارے اور لوگ ہیں جو کام کر رہے ہیں۔ آ ج کا کیس وفاقی محتسب کی کارکردگی کو سراہنے کیلئے مقرر کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ جیلوں کی حالت زار پر وفاقی محتسب نے 2 رپورٹس عدالت میں جمع کرائی ہیں، یہ ہماری اجتماعی ذمہ داری ہے کہ سب بہتری کیلئے کام کریں۔

دبئی کے جزیزے پر رہائشی پلازے میں آگ بھڑک اٹھی ، جانی نقصان نہیں ہوا

چیف جسٹس نے ریمارکس دئیے کہ جیلوں کی حالت زار کا جائزہ لینا انتظامیہ کی ذمہ داری ہے اور انتظامیہ جیلوں کی حالت زار بہتر کرنے میں ناکام ہوئی ۔ عدالت نے وفاقی محتسب کی رپورٹس پر جیلوں کی حالت میں بہتری کیلئے تمام صوبائی حکومتوں سے تجاویز طلب کرتے ہوئے مقدمے کی سماعت جنوری کے دوسرے ہفتے تک ملتوی کر دی ہے۔

مزید : اسلام آباد