لندن میں پھنسے پی آئی اے کے مسافروں کے اہلخانہ کیلئے بالآخر خوشخبری آ گئی

لندن میں پھنسے پی آئی اے کے مسافروں کے اہلخانہ کیلئے بالآخر خوشخبری آ گئی
لندن میں پھنسے پی آئی اے کے مسافروں کے اہلخانہ کیلئے بالآخر خوشخبری آ گئی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لندن (ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان انٹرنیشنل ائیر لائنز (پی آئی اے) کا ایک اور کارنامہ سامنے آ گیا ہے اور انکشاف ہوا ہے کہ لندن سے کراچی آنے والی فلائٹ تکنیکی وجوہات کے باعث 26 گھنٹے تاخیر کا شکار ہوئی جس کے باعث مسافروں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

چین میں استاد نے سکول دیر سے آنے والے طلبا ءکو انوکھی سزا سنادی

نجی خبر رساں ادارے اے آر وائی نیوز کے مطابق پی آئی اے کی پرواز پی کے 788 لندن کے ہیتھرو ائیرپورٹ سے کراچی جانا تھی، تکنیکی مسائل کے باعث 26 گھنٹے تاخیر کا شکار ہوئی۔ فلائٹ پر سوار ہونے کیلئے ائیرپورٹ پر پہنچنے والے 350 مسافر تاخیر کے باعث انتہائی تکلیف سے دوچار رہے اور انہیں پی آئی اے انتظامیہ کی جانب سے ہوٹل میں ٹھہرایا گیا۔ پی آئی اے خراب سیفٹی ریکارڈ کے باعث تنقید کا نشانہ بنی رہی ہے۔ حال ہی میں حویلیاں کے قریب اے ٹی آر جیٹ طیارہ گر کر تباہ ہوا جس کے نتیجے میں 47 افراد ہلاک ہوئے۔

طیارہ حادثہ: فرانسیسی تحقیقاتی ٹیم حویلیاں میں جائے حادثہ پر پہنچ گئی

اس حادثے کے بعد ملتان میں بھی ایک اور اے ٹی آر جیٹ طیارے کے انجن میں اس وقت آگ لگ گئی جب وہ 40 مسافروں کو لے کر اڑان بھرنے کیلئے رن وے پر دوڑ رہا تھا۔ اس واقعے کے بعد سول ایوی ایشن اتھارٹی کے حکم پر پی آئی اے نے اپنے تمام 10 اے ٹی آر طیارے شیک ڈاﺅن ٹیسٹ کیلئے گراﺅنڈ کر دئیے ہیں۔

مزید : قومی