قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے موسمیاتی تبدیلی کا اجلاس، مراد سعید اور وفاقی وزیر زاہد احمد میں نوک جھونک

قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے موسمیاتی تبدیلی کا اجلاس، مراد سعید اور ...
قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے موسمیاتی تبدیلی کا اجلاس، مراد سعید اور وفاقی وزیر زاہد احمد میں نوک جھونک

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے موسمیاتی تبدیلی کے اجلاس میں وفاقی وزیر زاہد حامد اور پاکستان تحریک انصاف کے رہنماءمراد سعید کے درمیان تلخ کلامی ہوئی تاہم چیئرمین کمیٹی نے بیچ بچاﺅ کراتے ہوئے معاملے کو رفع دفع کرایا۔

قومی ویمن کرکٹ ٹیم کی 2 کھلاڑی پیاگھر سدھارنے کو تیار، جنوری میں نئی زندگی کی شروعات کریں گی

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے موسمیاتی تبدیلی کا اجلاس ہو رہا تھا جس دوران مراد سعید نے کہا کہ موسمیاتی تبدیلیوں سے متعلق جو بل آپ نے پیش کیا ہے وہ اچھا ہے لیکن اس پر عملدرآمد کون کرے گا، جواب دیا جائے۔ اس پر وفاقی وزیر زاہد حامد نے کہا کہ میں اس سوال کا تین بار جواب دے چکا ہوں لیکن آپ سن نہیں رہے۔ اس پر مراد سعید نے کہا کہ میرے سوال کا وزیر نے جواب نہیں دیا اور آپ غصہ کیوں ہو رہے ہیں میں نے جواب مانگا ہے۔ اس پر زاہد حامد کا کہنا تھا کہ آپ نے اتھارٹی کو چیلنج کیا، اس پر جواب دیا۔

مراد سعید نے کہا کہ اگر میں برداشت نہیں ہو رہا تو چلا جاتا ہوں لیکن یہ رویہ مناسب نہیں ہے۔ اس پر چیئرمین قائمہ کمیٹی نے کہا کہ ایسا بالکل نہیں کہ آپ برداشت نہیں ہو رہے، آپ کے سوال کا جواب دیا جا چکا ہے ، آپ سیکشن اے کو پڑھیں، اس میں آپ کے سوال کا جواب موجود ہیں۔

گوجرانوالہ میں بغیر اجازت میکے جانے پر شوہر نے بیوی کو آگ لگا دی ، تشویشناک حالت میں ہسپتال منتقل

وفاقی وزیر زاہد احمد کا مزید کہنا تھا کہ آپ ایک سٹرونگ اپوزیشن ہیں لیکن یہ بل پاکستان میں موسمیاتی تبدیلیوں سے متعلق ہے اور انتہائی اہم ہے، اس میں آپ کا تعاون درکار ہے۔ آپ کے سوال کا جواب اگر نہیں مل رہا تو آپ بل کی حمایت کریں اور اگر کوئی تحفظات ہوں گے یا مزید سوالات ہوں گے تو ان کا جواب اسمبلی میں بل پیش کرنے کے موقع پر دیدیا جائے گا۔

مزید : قومی /اہم خبریں