تاجروں کے وفد کی وزیراعظم کے معاون خصوصی سے ملاقات، مسائل سے آگاہ کیا

تاجروں کے وفد کی وزیراعظم کے معاون خصوصی سے ملاقات، مسائل سے آگاہ کیا

اسلام آباد(این این آئی) مرکزی انجمن تاجران پاکستان اور ٹریڈرز کمیٹی اسلام آبادکے صدر اجمل بلوچ کی قیادت میں اسلام آباد کی مارکیٹوں کے نمائندہ وفد سے وزیراعظم کے معاون خصوصی حافظ عثمان عباسی سے ان کے دفتر میں ملاقات کی ۔ اس موقع پر پاکستان مسلم لیگ اسلام آباد کے جنرل سیکرٹری ساجد عباس بھی موجود تھے وفد میں آئی سی سی آئی کے سابق سینئر نائب صدر خالد چوہدری۔ قاضی الیاس ۔ خورشید قریشی۔ دلدار عباسی۔ عبدالرحمن صدیقی ۔ شہزاد عباسی۔ یوسف راجپوت۔ الطاف شاہ۔ خرم اقبال۔ کامران کا کا خیل۔ چوہدری وقاص گُجر ۔ کامران کامل۔ اویس شیخ۔ راجہ فیاض۔ اشفاق عباسی۔ زاہد قریشی سمیت دیگر نمائندے بھی شامل تھے۔ وفد سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم کے معاون خصوصی حافظ عثمان عباسی نے کہا کہ قانون کرایہ داری سمیت اسلام آباد کے تاجروں کو درپیش تمام مسائل سے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی آگاہ ہیں۔

کیوں کہ وہ بھی اسلام آبادکے شہری ہیں منصفانہ قانون کرایہ داری انشاء اللہ وزیراعظم کی ہدایت پر بہت جلد نافذ ہوگا۔ اگلے ہفتے وزیراعظم تاجروں کے وفد سے ملاقات کریں گے۔ انہون نے مذید کہا کہ دیگر مسائل حل کرنا سی ڈی اے کی ذمہ داری ہے۔ اور ملاقات کے بعد تمام محکموں کو بھی ہدایات جاری کردی جائیں گی۔

مرکزی انجمن تاجران پاکستان اور ٹریڈرز ایکشن کمیٹی اسلام آباد کے صدر اجمل بلوچ نے اس موقع پر اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ الیکشن میں تمام پارٹیوں نے اپنے انتخابی منشور میں اسلام آباد میں قانون کرایہ داری کے نفاذ کا وعدہ کیا تھا بعد ازاں رکن قومی اسمبلی میاں عبدالمنان نے اسمبلی میں ترمیمی بل پیش کر دیا تھا لیکن دو سال گزرنے کے باوجود اسمبلی سے پاس نہ کرایا جاسکا ہے جبکہ قائمہ کمیٹی برائے داخلہ اور ضلعی انتظامیہ بھی منظوری دے چکی ہیں ۔ انہوں مذید کہا کہ سابق وزیراعظم میاں نواز شریف نے تاجروں کے اجتماع میں اس قانون کے نفاذ کا وعدہ کیا تھا اب تاجر برادری اُمید کرتی ہے کہ وزیراعظم شاہد خاقان عباسی مسلم لیگ کا کیا گیا وعدہ پورا کرنے میں اپنا کردار ادا کریں گے۔ ٹریڈرز ایکشن کمیٹی کے سیکرٹری خالد چوہدری ۔ سمال ٹریڈرز چیمبر کے صدر قاضی الیاس اور دیگر تاجر راہنماؤں نے خیالات کا اظہار کیا اور قانون کرایہ داری کے فوری نفاذ اور آئی ٹین سمیت تمام جبری بے دخلیوں رکوانے کا مطالبہ کیا۔

مزید : کامرس