ایڈووکیٹ جنرل آفس ملازمین جوڈیشل الاؤنس نہ ملنے پر سراپا احتجاج

ایڈووکیٹ جنرل آفس ملازمین جوڈیشل الاؤنس نہ ملنے پر سراپا احتجاج

لاہور(نامہ نگار خصوصی)ایڈوکیٹ جنرل آفس کے ملازمین پنجاب حکومت کی جانب سے 30 فیصد جوڈیشل الاؤنس نہ ملنے پر سراپا احتجاج ،ملازمین نے بازؤں پر سیاہ پٹیاں باندھ کر جوڈیشل الاؤنس کی بحالی کا مطالبہ کیا اور حکومت خلاف نعرے لگائے ۔تفصیلات کے مطابق ایڈوکیٹ جنرل آفس پنجاب کے ملازمین نے ایڈوکیٹ جنرل آفس کے باہر 2گھنٹے قلم چھوڑ احتجاج کیا ۔ملازمین نے بازؤں پر سیاہ پٹیاں باندھ رکھی تھیں ،مظاہرین مطالبات کے حق میں نعرے لگاتے رہے ۔مظاہرین کا کہنا ہے کہ لاہور ہائیکورٹ نے ایڈووکیٹ جنرل آفس کے ملازمین کے لئے 30 فیصد جوڈیشل الاؤنس مختص کیا تاہم چیف سیکرٹری پنجاب نے 2009 ء سے ملازمین کا 30 فیصد جوڈیشل الاؤنس منجمد کر رکھا ہے جو ملازمین کے حق پر ڈاکہ ڈالنے ک مترادف ہے ،مظاہرین کا مزیدکہنا ہے کہ ایپکا عہدیداران اور ممبران ایکزیکٹو کمیٹٰی نے چیف سیکرٹری پنجاب کو الاؤنس کی منظوری کے لئے سمری بھجوائی مگر چیف سیکرٹری پنجاب نے جوڈیشل الاؤنس بحال نہیں کیا ،مظاہرین نے دھمکی دی ہے کہ ایڈووکیٹ جنرل آفس کے تمام دفاتر میں بدھ کے روز بھی 2گھنٹے احتجاج کیا جائے گا اور پھر اگر ان کے مطالبات پورے نہ ہوئے ملازمین لاہور کی فین روڈ یا سول سیکرٹریٹ کے سامنے دھرنا دیں گے جس کی تاریخ کا اعلان بعد میں کیا جائے گا ۔

مزید : علاقائی