پولیس شہداء کی قربانیاں رائیگاں نہیں جائینگی ،راحت اللہ

پولیس شہداء کی قربانیاں رائیگاں نہیں جائینگی ،راحت اللہ

ا لپوری(ڈسٹرکٹ رپورٹر) ڈسٹرکٹ پولیس افیسر شانگلہ راحت اللہ خان نے کہا ہے کہ پولیس شہداء نے ملک اور قوم کے خاطر اپنے جانوں کا نظرانہ پیش کرکے اپنے جانوں کو قربان کیا ہیں،شہید کبھی مرتا نہیں وہ اب بھی ہمارے دلوں میں زندہ ہیں ، شہدائے پولیس کے قربانیوں کا ازالہ نہیں کیا جاسکتا مگر پھر بھی انسپکٹر جنرل خیبر پختونخوا صلاح الدین محسود کے خصوصی ہدایت کے پیش نظر میں آپ تمام کو یقین دلاتا ہوں کہ لواحقین شہداء کے ساتھ ہر موڑ پر کھڑے رہینگے، ان کے تکالیف کے ہر ممکن کوشش کرینگے ،ان کے خبر گیری کرتے رہیں گے شہداء کے لواحقین اکیلے نہیں ہیں شانگلہ پولیس ان کے ساتھ ہیں،پولیس میں ریفارمز سے پولیس کی مورال بلند ہوا ہے کرپشن کے خاتمے اور عوام کا اعتماد بحال ہو گیا ہے، خیبر پختونخوا پولیس نے سپاہی سے لیکر آئی جی رینک تک دہشت گردی کے خلاف بہادری سے لڑ کر اپنے کل کوآج کے لئے قربان کر دئے ہیں، قربانیوں کا یہ سلسلہ جاری رہیگا ، دہشت گرد عناصر ہمارے حوصلے پست نہیں کر سکتے - ان خیالات کا اظہار انھوں نے منگل کے روز اپنے دفتر واقع الپوری میں شانگلہ پولیس شہداء لواحقین کے ساتھ دربار میں کہی-جس میں شہداء سل کے انچارج ایس ائی علی حسین- لواحقین شہداء شانگلہ نے کثیر تعداد میں شرکت کی اور اپنے تحفظات اور درپیش مسائل پر ڈی پی او کو تفصیلی طور پر اگاہ کیا ، ڈی پی او شانگلہ نے سختی سے متعلقہ حکام ہدایت کی کہ تمام جائزمسائل اور مشکلات کو حل کیا جائے اس حوالے سے کوئی غفلت یا کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی،پولیس شہداء تنہا نہیں ان کے ساتھ ہر مشکل وقت میں شانگلہ پولیس اور میں بذات خود ہمہ وقت دستیاب ہو۔ لواحقین شہداء کو جو بھی مسلہ ہو وہ براہ راست میرے نمبر پر رابط کر سکتے ہیں میرے دفتر کے دروازہ ہر وقت ان کیلئے کھلا رہیگا، اس حوالے سے لواحقین کو درپیش مسا ئل پر ایس ڈی پی اوز اور متعلقہ ایس ایچ اوز کو بھی ہدایات جاری کر دئے ہیں کہ لواحقین شہداء کے خاندانوں کے ساتھ ہر ممکن تعاون کیا جائے اور ان کے مسائل ان کے دہلیز پر بلا کسی تاخیر کے حل کئے جائے، ہر وقت لواحقین شہداء کے خاندانوں کے ساتھ رابطے میں رہیں تاکہ ان کی مسائل کی حل فوری طور پر ممکن بنایا جا سکیں- شانگلہ پولیس اپنے شہداء اپنے شہداء پر فخر کرتی ہیں ،قیام امن کی بحالی میں اپنے جانوں کے نظرانے دینے والے نوجوانوں کو سلام پیش کرتے ہیں ، لواحقین کے ساتھ ہر وقت ہر مشکل گھڑی میں ساتھ رہینگے ، ان پر کسی قسم کے آنچ انے نہیں دینگے ، اخر میں شہداء کی درجات کی بلندی کیلئے دعا مانگی گئی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر