کیا واقعی دنگل کی اداکارہ زائرہ وسیم کو دورانِ پرواز جنسی طور پر ہراساں کیا گیا تھا ؟ دو ایسے لوگ سامنے آگئے کہ پوری انڈسٹری کو ہلا کر رکھ دیا

کیا واقعی دنگل کی اداکارہ زائرہ وسیم کو دورانِ پرواز جنسی طور پر ہراساں کیا ...

ممبئی (ڈیلی پاکستان آن لائن) اداکارہ زائرہ وسیم کی طرف سے دورانِ پرواز جنسی طور پر ہراساں کیے جانے کے الزام کے بعد ملزم کو گرفتار کرلیا گیا ہے لیکن اب اس معاملے میں ملزم کی اہلیہ اور ایک ساتھی مسافر بھی سامنے آگئے ہیں جنہوں نے اداکارہ کے الزام کو بے بنیاد قرار دیا ہے۔

اداکارہ زائرہ وسیم کے ساتھ سفر کرنے والے ایک مسافر نے بھارتی اخبار کو بتایا کہ ملزم وِکاس سچ دیوا جہاز میں اپنی نشست پر بیٹھتے ہی سوگیا تھا ۔ اس کی صرف اتنی سی غلطی ہے کہ اس نے اپنا پاﺅں زائرہ وسیم کی کرسی کے ہاتھ پر رکھ دیا تھا جس پر اداکارہ غصے میں اس پر چلائیں جس کے بعد اس نے معذرت کی اور جہاز لینڈ کرنے سے پہلے ہی معاملہ ختم ہوگیا۔

یہ خبر بھی پڑھیں: زائرہ وسیم کو جہاز میں جنسی طور پر ہراساں کرنے والا شخص گرفتار

اس سے قبل وِکاس سچ دیوا کی اہلیہ نے بھی اپنے خاوند کی بے گناہی کے حق میں گواہی دی اور کہا کہ ان کا شوہر دہلی میں اپنے انتقال کرجانے والے ماموں کی آخری رسومات میں شرکت کے بعد واپس آرہا تھا، اس لیے وہ اس قسم کی حرکت کا تصور بھی نہیں کرسکتا ۔

’میری آنکھ کھلی تو میں نے دیکھا کہ اس کا خوبصورت پاﺅں میری کمر اور گردن سہلا رہا ہے‘ زائرہ وسیم نے روتے ہوئے ایسی بات کہہ دی کہ ویڈیو دیکھ کر آپ کو بھی غصہ آجائے گا

واضح رہے کہ ہفتے اور اتوار کی درمیانی شب دہلی سے ممبئی جانے والی وستارا ایئر لائن کی پرواز کے دوران دنگل کی اداکارہ زائرہ وسیم کو مبینہ طور پر جنسی ہراسگی کا سامنا کرنا پڑا تھا۔ انہوں نے اپنے ساتھ پیش آنے والے واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر شیئر کی تھی جس پرہنگامہ برپا ہوگیا اور جہاز کے ٹکٹ سے شناخت کرکے ممبئی کے 39 سالہ بزنس مین وکاس سچ دیوا کو ان کے گھر سے گرفتار کرلیا گیا تھا۔

مزید : تفریح

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...