شام کی ہی سرزمین پر ایک عام سے روسی فوجی نے صدر بشارالاسد کے ساتھ ایسا کام کردیا کہ انہیں پوری دنیا کے سامنے شرم سے پانی پانی کردیا، دیکھ کر آپ کو بھی اس منظر پر یقین نہیں آئے گا کہ ایسا بھی ممکن ہے

شام کی ہی سرزمین پر ایک عام سے روسی فوجی نے صدر بشارالاسد کے ساتھ ایسا کام ...
شام کی ہی سرزمین پر ایک عام سے روسی فوجی نے صدر بشارالاسد کے ساتھ ایسا کام کردیا کہ انہیں پوری دنیا کے سامنے شرم سے پانی پانی کردیا، دیکھ کر آپ کو بھی اس منظر پر یقین نہیں آئے گا کہ ایسا بھی ممکن ہے

دمشق(مانیٹرنگ ڈیسک) روسی فوج شام کے صدر بشارالاسد کی حمایت میں داعش و دیگر مخالف گروپوں سے برسرپیکار ہے اور اس کی فتوحات میں معاون تو ثابت ہو رہی ہے لیکن گزشتہ دنوں شام ہی کی سرزمین پر ایک عام سے روسی فوجی نے صدر بشارالاسد کے ساتھ ایسا کام کر دیا کہ انہیں پوری دنیا کے سامنے شرمندگی اٹھانی پڑ گئی۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق شام میں فتح کا اعلان کرنے کے لیے گزشتہ دنوں روسی صدر ولادی میر پیوٹن وہاں پہنچے تھے۔ وہاں شامی صدر بھی ان کے استقبال کے لیے موجود تھے۔

’یہ3 نسلیں خدا کو نہیں بنانی چاہیے تھیں، یہ یہودی‘ صدام حسین اپنی ٹیبل پر ہمیشہ یہ تختی رکھتے تھے، یہودیوں کے علاوہ 2 دوسرے نام کونسے تھے؟ جان کر آپ ہکے بکے رہ جائیں گے

جب ولادی میر پیوٹن اپنے جہاز سے اتر کر آئے اور بشارالاسد سے معانقے کے بعد آگے بڑھے تو بشارالاسد نے بھی ان کے پیچھے جانے کی کوشش کی لیکن ایک روسی فوجی نے ان کو بازو سے پکڑ کر روک لیا اور صدر پیوٹن کے پیچھے جانے سے منع کرتے ہوئے وہیں کھڑے رہنے کی ہدایت کر دی۔ اس پر بشارالاسد بھی چپ چاپ وہیں اس فوجی کے پاس کھڑے ہو گئے۔ رپورٹ کے مطابق واقعے کی منظرعام پر آنے والی ویڈیو نے پوری دنیا کو حیران کر دیا۔ یہ ویڈیو شام کے شہر لتاکیا کے قریب واقع ایک فوجی ہوائی اڈے پر بنائی گئی تھی۔

ویڈیو دیکھیں:

مزید : بین الاقوامی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...