بھارتی پبلک سروس کمیشن کے امتحانات میں سوالات پاکستانی ویب سائٹ سے نقل کئے :بھارتی اخبار کا دعویٰ

بھارتی پبلک سروس کمیشن کے امتحانات میں سوالات پاکستانی ویب سائٹ سے نقل کئے ...
بھارتی پبلک سروس کمیشن کے امتحانات میں سوالات پاکستانی ویب سائٹ سے نقل کئے :بھارتی اخبار کا دعویٰ

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

ارونا چل پردیش (یوا ین پی)بھارت کی ریاست ارونا چل پردیش میں پبلک سروس کمیشن کے امتحانات میں نصف سے زیادہ سوالات پاکستان کی ایک ویب سائٹ سے نقل کیے گئے ہیں ۔

غیرملکی میڈیا کے مطابق بھارتی اخبا ر نے اپنی رپورٹ میں دعویٰ کیا ہے کہ جس ویب سائٹ سے یہ سوالات نقل کیے گئے ہیں وہ پاکستان میں سول سروس امتحانات کیلئے مواد اور معلومات فراہم کرتی ہے ۔ کچھ سوالات 2008 کے یونین پبلک سروس کمیشن کے امتحانوں سے نقل کئے گئے ہیں ۔اخبار نے دعویٰ کیا کہ سماجیات کے90 فیصد سوالات مبینہ طور پر ایک آن لائن ڈسکشن فورم سے لئے گئے تھے ، عمومی تاریخ ، سماجیات اور سیاسیات کے کچھ سوالات غیر ملکی تناظر میں تھے ۔ایک امیدوار کا کہنا تھا کہ جب ہم نے کراس چیک کیا تو معلوم ہواکہ یہ سوالات توپاکستانی ویب سائٹ سے نقل کیے گئے ہیں۔

رپورٹ کے تحت امتحانات کے زیادہ تر پیپرز فوٹو کاپی تھے،پرچہ جات مرتب کرتے وقت کاپی پیسٹ سے کام لیا گیا جو کہ غیر قانونی عمل ہے ۔اس سے ریاست میں ایک تنازع کھڑا ہو گیا اور دوبارہ امتحانات لینے کا مطالبہ کیاجا رہا ہے۔دوسری جانب پبلک سروس کمیشن کے سیکریٹری کا کہنا ہے پرچہ جات کی جانچ کی جا رہی ہے اگر ان میں کوئی غلطی یا کوتاہی ثابت ہوئی تو کمیشن جلد اس بارے لائحہ عمل دے گا ۔واضح رہے کہ 2015میں بھی اروناچل پردیش ریاست کے پبلک سروس کمیشن کے مقابلے امتحانات کے پرچے آوٹ ہوگئے تھے جس پر چار افسران کو معطل کر دیا گیا تھا ۔

بیت المقدس سے متعلق امریکی صدرکے فیصلے پرافسوس،سعودی عرب فلسطینیوں کے حقوق کے حصول تک حمایت جاری رکھے گا:شاہ سلمان

مزید : بین الاقوامی