حکومت عوام کے جان ومال کے تحفظ میں مکمل ناکام ہوچکی ہے، سراج الحق

حکومت عوام کے جان ومال کے تحفظ میں مکمل ناکام ہوچکی ہے، سراج الحق

  



مریدکے(نامہ نگار)جماعت اسلامی کے مرکزی امیر سراج الحق نے کہا ہے حکومت عوام کے جا ن و مال کے تحفظ میں مکمل ناکام ہو چکی ہے، پنجاب انارکی، بد امنی کا شکا ر ہے اور سڑکیں غیر محفوظ ہو چکی ہیں، ہسپتالوں میں بیمار محفوظ نہیں جبکہ مریدکے سمیت متعدد علاقے نو گو ایریا بن چکے ہیں۔ چند روز قبل کچہری سے واپسی پر قتل ہونے والے جماعت اسلامی کے سابق امیدوار صوبائی اسمبلی شبیر حسین سرویا، یوتھ ونگ کے صوبائی ڈپٹی سیکرٹری صداقت علی صداقت اور میڈیا سیکرٹری اسد ہاشمی کے گھر ان کے خاندان کے ساتھ تعزیت کے موقع پر کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے مرکزی امیر نے کہا کہ پولیس کی ناکامی کے باعث مسلح بدمعاشوں نے جتھے بنا کر پورے شہر کو یرغمال بنا رکھا ہے اور لوگوں کی عزتوں سے دن دیہاڑے کھیلا جا رہا ہے مگر پولیس عوام کو تحفظ فراہم کرنے کے بجائے وی آئی پی افراد کی خدمت میں مصروف ہے۔ سراج الحق نے مزید کہا کہ قاتلوں نے دہشت گردی کا مظاہرہ کرتے ہوئے معصوم افراد کو دن دیہاڑے موت کے گھاٹ اتار دیا مگر پولیس تاحال ملزمان کوگرفتار نہیں کر سکی۔ جماعت اسلامی ایک خاندان ہے اور خاندان کے ہر فرد کا تحفظ ہمارا فرض ہے، ہم اپنے شہداء کا خون رائیگاں نہیں جانے دیں گے اور قاتلوں کو کیفر کردار تک پہنچا کر ہی دم لیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ناکام حکومت نے عوام کو سبز باغ دیکھا کر ٹرک کی بتی کے پیچھے لگا رکھا ہے لیکن یہی باشعور عوام ان کا بوریہ بستر گول کر دیں گے۔ انہوں نے یقین دلایا کہ جماعت اسلامی کا وکلاء ونگ مقتولین کے کیس کو ڈیل کرے گا اور یتیم بچوں کا پورا خیال رکھا جائے گا۔ جماعت اسلامی ضلع شیخوپورہ کے امیر سرفراز احمد ریحان نے اعلان کیا کہ ضلعی تنظیم کی طرف سے تینوں مقتولین کے تمام بچوں کو تاحیات فی کس3500ماہانہ وظیفہ دیا جائے گا تا کہ وہ اپنی تعلیم کا سلسلہ جاری رکھ سکیں۔سراج الحق صوبائی امیر جاوید قصوری،شاہد منیر ملک صدر یوتھ پنجاب،محمد آصف ورک امیر ضلع شیخوپورہ،محمد عمران عثمانی صدر یوتھ شیخوپورہ،چوہدری زاہد عمران کوروٹانہ امیر تحصیل مریدکے اور مقامی قیادت کے ہمراہ تینوں مقتولین کے گھر گئے اور ورثاء کو ہر قسم کے تعاون کا یقین دلایا۔

سراج الحق

مزید : پشاورصفحہ آخر