حمزہ شہباز کے جوڈیشل ریمانڈ میں توسیع، شہباز شریف پیش نہ ہوئے 

حمزہ شہباز کے جوڈیشل ریمانڈ میں توسیع، شہباز شریف پیش نہ ہوئے 

  



لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت نے وکلاء کی ہڑتال کے باعث حمزہ شہباز کیخلاف آمدنی سے زائد اثاثہ جات اور رمضان شوگر ملز کیس کی سماعت بغیر کارروائی کے ملتوی کردی،رمضان شوگر ملزکیس میں اپوزیشن لیڈرشہباز شریف بیرون ملک ہونے کے باعث عدالت پیش نہیں ہوئے۔عدالت نے آمدنی سے زائد اثاثہ جات کیس میں حمزہ شہباز کے جوڈیشل ریمانڈ میں 20دسمبرتک توسیع کردی، عدالت نے آئندہ سماعت پرحمزہ شہباز کو عدالت پیش کرنے کی ہدایت کی ہے،دوسری جانب میاں شہباز شریف بیرون ملک ہونے کی بناء پرعدالت پیش نہیں ہوئے،احتساب عدالت کے جج امجد نذیرنے رمضان شوگر ملز کیس میں ملزم حمزہ شہباز کے جوڈیشل ریمانڈ میں 23 دسمبر تک توسیع کرتے ہوئے کیس کی سماعت ملتوی کردی۔

حمزہ کا ریمانڈ

لاہور(نامہ نگار)احتساب عدالت کے جج چودھری امیر محمد خان نے شہباز شریف فیملی کے اثاثہ جات منجمد کرنے کا12 صفحات پر مشتمل تفصیلی فیصلہ جاری کردیاہے۔ فیصلے میں عدالت نے قرار دیا ہے کہ نیب کے تفتیشی افسر نے دائر درخواستوں میں منجمد کئے جانیوالے اثاثوں کا ریکارڈ پیش کیا، عدالت تمام قانونی تقاضوں کو مکمل کرتے ہوئے اثاثے منجمد کرنے کا حکم دیتی ہے، شہباز شریف شریف فیملی عدالتی فیصلے اور اعتراضات پر 14 دنوں میں درخواست دے سکتی ہے، فیصلے میں مزیدکہا گیا ہے کہ نیب کے پراسیکیوٹر نے بتایا ہے کہ مشتاق الیاس چینی اور یاسر چینی اعتراف جرم کر چکے ہیں،دونوں ملزمان سابق وزیراعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف کے بیٹے سلمان شہباز کے لئے منی لانڈرنگ میں سہولت کار کے طور پر کام کرتے تھے جبکہ سید طاہر نقوی، نثار احمد اور علی احمد خان شریف فیملی کی بینامی کمپنیوں کو دیکھتے ہیں۔

اثاثہ جات منجمد کیس

مزید : صفحہ اول