طالبان عملی زندگی میں بھی دور طالب علمی کی طرح کارنامے انجام دیں :گورنر سندھ

طالبان عملی زندگی میں بھی دور طالب علمی کی طرح کارنامے انجام دیں :گورنر سندھ

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر)گورنر سندھ عمران اسماعیل نے کہا ہے کہ طبی تعلیم کے میدان میں طلبہ سے ;200;گے رہنے والی طالبات پیشہ وارانہ اور عملی زندگی میں ;200;گے رہنے کے بجائے کہیں کھو جاتی ہیں ، حکومت چاہتی ہے کہ تعلیمی میدان میں ;200;گے رہنے والی طالبات عملی زندگی میں بھی وہی کار ہائے نمایاں سر انجام دیں جو انہو ں نے دورِ طالب علمی میں انجام دیئے، یہ بات انہوں نے ڈا یونیورسٹی ;200;ف ہیلتھ سائنسز کے اوجھا کیمپس کرکٹ گرانڈ میں منعقد ہونے والے دسویں کانوو کیشن میں بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کہی، ڈا یونیورسٹی کے دسویں سالانہ جلسہ تقسیم اسناد میں 1349طلبا و طالبات کو گریجویشن، پوسٹ گریجویٹ ڈپلومہ اور ڈاکٹریٹ کی ڈگریاں تفویض کر دی گئیں ، گورنر سندھ نے گریجویٹس کو اسناد تفویض کیں ، جبکہ بہترین طلبا کو طلائی، چاندی اور کانسی کے میڈلز پہنائے، اس موقع پر ڈا یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر محمد سعید قریسی، پرو وائس چانسلر زرناز واحد، پرو وائس چانسلر اور چئیر مین کانووکیشن کمیٹی پروفیسر کرتار ڈوانی، پرو وائس چانسلر خاور سعید جمالی، رجسٹرار امان اللہ عباسی، پرنسپل ڈا میڈیکل کالج پروفیسر امجد سراج میمن، وائس پرنسپل ڈا انٹر نیشنل میڈیکل کالج پروفیسر رملہ ناز، پروفیسر فواد علی موسی بھی موجود تھے، جبکہ سینئر فیکلٹی میمبرز پروفیسر سید مکرم علی، پروفیسر زیبا حق، پروفیسر صبا سہیل، پروفیسر نواز لاشاری، پروفیسر صنم سومرو، پروفیسر زاہد اعظم، پروفیسر ندیم احمد، پروفیسر سنبل شمیم، پروفیسر جہاں ;200;را، پروفیسر فوزیہ امتیاز، پروفیسر اختر علی بلوچ، پروفیسر نثار را سمیت اساتذہ، طلبہ و طالبات اور والدین کی بڑی تعداد موجود تھی،کانووکیشن سے خطاب کرتے ہوئے گورنر سندھ نے کہا کہ ڈا ایشیا کی پانچ سو بہترین یونیورسٹیز میں شامل ہے، ;200;پ کے لیے یہ فخر کی بات ہے، ;200;پ ملک کی بہترین یونیورسٹی کے طالب علم ہیں ،گورنر سندھ نے کہا کہ ابھی کچھ دیر بعد جو نتاءج سامنے ;200;ئیں گے، وہ میں پہلے بتا دیتا ہو ں کہ سارے گولڈ میڈل لڑکیوں نے حاصل کئے ہوں گے، ہماری لڑکیاں تعلیم کے میدان میں بہت ;200;گے ہیں ، عملی زندگی میں انہیں ;200;گے لانے کے لیے کوشش کرنا ہونگی، انہوں نے کہا کہ میرے دور طالب علمی میں بھی میری بہنیں پڑھائی میں مجھ سے ;200;گے تھیں ، انہوں نے کہا کہ پاکستان سے ہمارے بہترین طا لب علم بیرون ملک چلے جاتے ہیں ، امریکا میں جو دنیا کا پہلا ہارٹ ٹرانسپلانٹ ہواہے وہ ڈا وَیونیورسٹی کے سابق طالبعلم نے کیا ہے یہ کتنی عظمت کی بات ہے کہ ایک پاکستانی نے یہ کارنامہ انجام دیا ہ میں ایسی پالیسی ترتیب دینا ہوگی کہ ہمارے باصلاحیت طالبعلم اپنی صلاحیت یہاں پر اپنے لوگوں کے درمیان استعمال کریں ، انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت نے کامیاب جوان پروگرام اسی سوچ کے تحت شروع کیا ہوا ہے، انہو ں نے کہا کہ اس پروگرام کے تحت ;200;پ 50 لاکھ روپے کا قرض لے کر چھوٹا کلینک، ڈائیگناسٹک سینٹر یا ریسرچ سینٹر بناسکتے ہیں ، انہوں نے اس امید کا اظہار کہا کہ کانووکیشن میں کامیاب طلبا عملی زندگی میں عوام کی خدمت کو اپنا مشن بنائیں گے، انہو ں نے طلبا اور ان کے والدین کو مبارکباد دیتے ہوئے کہا کہ ;200;پ کی محنت نے ;200;ج یہ خوش قسمت دن دیکھنا نصیب ہوا، والدین نے اپنی دیگر ضرورتوں کا گلا دبا کر ;200;پ کو تعلیم کے لیے وسائل فراہم کیے، جس پر وہ مبارکباد کے مستحق ہیں ، اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے وائس چانسلر پروفیسر محمد سعید قریشی نے کہا کہ ڈا یونیورسٹی بہترین ہیلتھ کئیر پروفیشنل فراہم کر رہی ہے، کامیابی کا یہ دن ;200;پ کے اور والدین کے لیے قابل فخر ہے، انہو ں نے طلبا پر زور دیا کہ انسانیت کی خدمت کے لیے کوئی کسر اٹھا نہ رکھیں ، یہ ;200;پ کے لیے اور ملک کے لیے بہت ضروری ہے، انہو ں نے کہا کہ خاص طور پر مستحق لوگوں کی مدد کو اپنا شعار بنائیں ، انہو ں نے کہا کہ ہر مذہب نے علم کے حصول پر زور دیا،ہم یہاں ڈا یونیورسٹی میں بہترین تعلیم اور جدید تحقیق پر مبنی طبی ٹیکنالوجی سکھا رہے ہیں ، قبل ازیں پر و وائس چانسلر اور چیئر مین کانووکیشن کمیٹی پروفیسر کرتار ڈانی نے خطبہ استقبالیہ پیش کیا جبکہ ;200;خر میں پرو وائس چانسلر پروفیسر زرناز واحد نے اظہار تشکر کیا ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر