پی آئی سی پر حملہ ، وزیراعظم عمران خان کے بھانجے حسان نیازی کے گھر پر پولیس کا چھاپہ

پی آئی سی پر حملہ ، وزیراعظم عمران خان کے بھانجے حسان نیازی کے گھر پر پولیس کا ...
پی آئی سی پر حملہ ، وزیراعظم عمران خان کے بھانجے حسان نیازی کے گھر پر پولیس کا چھاپہ

  



لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )انویسٹی گیشن ونگ نے پی آئی سی حملے کے معاملے میں وزیراعظم عمران خان کے بھانجے حسان نیازی کو گرفتار کرنے کیلئے ان کے گھر پر چھاپہ مارا تاہم وہ وہاں موجود نہ ہونے کے باعث گرفتار نہیں ہو سکے ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق ایک روز قبل وکلاءنے پی آئی سی پر حملہ کیا جس دوران بڑے پیمانے پر توڑ پھوڑ کی گئی جبکہ ہسپتال کے باہر ہوائی فائرنگ اور پولیس کی گاڑی کو بھی جلایا گیا ، ڈاکٹر ہنگامہ آرائی کے باعث ہسپتال چھوڑ کر چلے گئے جس کے نتیجے میں طبی سہولیات نہ ملنے پر چھ مریض جان کی بازی ہار گئے ۔

پولیس نے وکلاءکی جانب ے پی آئی سی پر حملے کر نے کے واقعہ کے خلاف دو مقدمات درج کیے ہیں جن میں سے ایک ہسپتال کے اندر ہنگامہ آرائی اور توڑ پھوڑ پر درج کیا گیا ہے جبکہ دوسرا مقدمہ ہسپتال کے باہر ہوائی فائرنگ اور پولیس کی گاڑی کو آگ لگانے پر درج کیا گیاہے ۔ وزیراعظم عمران خان کے بھانجے کو ہسپتال کے باہر گاڑی جلائے جانے والی ویڈیو میں دیکھا گیا جوکہ سوشل میڈیا پر بھی وائر ل ہوئی ۔

انویسٹی گیشن ونگ نے اسی معاملے میں گرفتاری کیلئے حسان نیاز ی کے ریس کورس میں واقع گھر پر چھاپہ مارا اور گھر کی تلاشی لی لیکن وہ گھر پر موجود نہیں تھے ، پولیس کے ہمراہ لیڈیز کانسٹیبلز بھی تھیں جبکہ سرچ وارنٹ بھی حاصل کیے گئے تھے ۔چھاپے سے کچھ دیر قبل ہی حسان نیازی گھر سے نکل چکے تھے ۔ ڈی آئی جی انویسٹی گیشن نے چھاپے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ حسان نیازی گھر پر نہ ہونے کے باعث گرفتار نہیں ہو سکے ہیں ، ان کی گرفتاری کیلئے جدید ٹیکنالوجی کا سہارا لیا جارہاہے ، حسان نیازی بھی پی آئی سی کے باہر حملے میں ملوث تھے ،پولیس نے مقدمات میں حسان نیازی کو نامزد نہیں کیاتھا ۔

مزید : اہم خبریں /قومی


loading...