یو ٹیوب پر چھپائی فحش فلمیں حیرت انگیز انداز میں دریافت

یو ٹیوب پر چھپائی فحش فلمیں حیرت انگیز انداز میں دریافت
یو ٹیوب پر چھپائی فحش فلمیں حیرت انگیز انداز میں دریافت

  

ڈبلن (نیوز ڈیسک) دنیا کی مقبول ترین ویڈیو ویب سائٹ یوٹیوب کو برہنہ فلموں سے پاک سمجھا جاتا ہے مگر آئرلینڈ کے ایک صحافی نے اس ویب سائٹ پر درجنوں حیا سوز فلمیں ڈھونڈ نکالی ہیں جن سے خود یوٹیوب انتظامیہ بھی بے خبر تھی۔ صحافی مائتو کوکوئمن نے اخبار ”آئرش انڈیپنڈنٹ“ کو بتایا کہ ان کے روم میٹ میڈیا سٹڈیز کے طالب علم ہیں اور وہ یوٹیوب پر فلم کے موضع پر کچھ معلومات چاہ رہے تھے۔

ایرانی اداکارہ کی فحش ترین تصاویر نے ملک میں تہلکہ مچا دیا،حکومت نے خوفناک سز ا دینے کا عزم کر لیا

مائتو نے جب یوٹیوب پر انگریزی کی بجائے یورپ کی ایک قدرے قدیم زبان "Gaelic" کا لفظ "Scannon" (جس کا مطلب فلم ہے) لکھ کر سرچ کیا تو دیگر فلموں کے ساتھ درجنوں فحش فلمیں بھی سامنے آ گئیں۔ ان کا کہنا ہے کہ وہ یوٹیوب پر اس قسم کا بیہودہ مواد دیکھ کر دنگ رہ گئے اور فوراً ویب سائٹ کی انتظامیہ کو خبردار کر دیا جس کے بعد چند لمحوں میں ہی ان فلموں کو ختم کر دیا گیا۔

یوٹیوب کے ایک نمائندے کا کہنا ہے کہ ان کی ویب سائٹ پر فحش فلموں کی کوئی جگہ نہیں ہے اور ان کا سٹاف 24 گھنٹے اس قسم کے مواد کو ڈھونڈ کر ڈیلیٹ کرتا رہتا ہے جبکہ ایسا مواد بھیجنے والوں کے اکاﺅنٹ ہمیشہ کیلئے بند کر دیئے جاتے ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس