حکومت مساجد میں لاؤڈ سپیکر کے حوالے سے پالیسی پر نظر ثانی کرے،عبدالغفار روپڑی

حکومت مساجد میں لاؤڈ سپیکر کے حوالے سے پالیسی پر نظر ثانی کرے،عبدالغفار ...

لاہور(نمائندہ خصوصی) مساجد میں لاؤڈ سپیکرز اور دینی مدارس کے خلاف حکومت کی سخت ترین پالیسی اور علماء کرام پر ناجائز مقدمات کا اندراج قابل مذمت ہے ایمپلی فائر آرڈیننس پر فی الفور نظر ثانی کی جائے ان خیالات کا اظہار جماعت اہلحدیث پاکستان کے امیر حافظ عبدالغفار روپڑی نے گزشتہ روز اپنے ایک بیان میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ انتظامیہ و متعلقہ ادارے اپنا قبلہ درست کریں اور علماء کرام پر ناجائز مقدمات کے اندراج اور گرفتاریوں سے باز رہیں۔ اسلام دشمن طاقتیں باقاعدہ سازش کے تحت ملک میں دینی حلقہ کے خلاف کارروائیوں میں مصروف عمل ہیں کیونکہ وہ جانتے ہیں قرآن و سنت سے دوری ہی مسلمانوں کو کمزور کرنے کا اصل طریقہ ہے۔

اس حوالے سے تمام اہل حدیث جماعتوں کا اجلاس 15فروری بروز اتوار جامعہ دارالقدس لاہور میں منعقد کیا جا رہا ہے جس میں حکومتی ہٹ دھرمی اور پولیس گردی کے خلاف آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔

مزید : میٹروپولیٹن 4