گورنر ہاؤس ، وزیر اعلٰی ہاؤس سمیت اہم دفاتر کیلئے متبادل فول پروف سیکیورٹی پلان کی ہدایت

گورنر ہاؤس ، وزیر اعلٰی ہاؤس سمیت اہم دفاتر کیلئے متبادل فول پروف سیکیورٹی ...

لاہو ر(کر ائم رپو رٹر) انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب کیپٹن (ر) عارف نواز خان نے کہا ہے کہ وزیر اعلیٰ ہاؤس، گورنر ہاؤس اور سنٹرل پولیس آفس سمیت دیگراہم دفاتر کی سیکیورٹی کیلئے متبادل فول پروف سیکیورٹی پلان از سر نو ترتیب دیا جائے اور نیاسیکیورٹی پلان تشکیل دیتے ہوئے عدالتی احکامات اور عوامی سہولت کے تمام پہلوؤ ں کو مد نظر رکھا جائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پولیس دفاتر کے باہر واقع شاہراؤں پر ٹریفک کی روانی اور عوام کی آمدو رفت میں حائل رکاوٹوں کا مستقل سد باب کیا جائے اورسڑکوں کی غیر ضروری بندش کے خاتمے کے ساتھ ساتھ تجاوزات کو دوبارہ ہرگز قائم نہ ہونے دیا جائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز سنٹرل پولیس آفس میں اعلیٰ سطحی اجلاس میں سینئر پولیس افسران کو ہدایات دیتے ہوئے کیا۔ آئی جی کی زیر صدارت اجلاس میں سی سی پی او لاہور کیپٹن (ر)محمد امین وینس، ایڈیشنل آئی جی آپریشنز عامر ذوالفقار خان، ایڈیشنل آئی جی سپیشل برانچ فیصل شاہکار، ایڈیشنل آئی جی سی ٹی ڈی رائے طاہر، ڈی آئی جی آپریشنزلاہور ڈاکٹر حیدر اشرف، ایس پی سیکیورٹی عمارہ اطہر سمیت دیگر اعلی افسران بھی موجود تھے۔ اجلاس میں صوبائی اور ضلعی حکومتوں کے حساس دفاتر کے باہر سے تجاوزات ہٹانے کے بعدپیدا ہونے والی سیکیورٹی صورتحال سے متعلقہ امور زیر بحث آئے۔سی سی پی او لاہور نے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ عدالتی احکامات کے مطابق پولیس کے تمام دفاتر کے باہر سے سیکیورٹی بیرئیرز کو ہٹایا جا چکا ہے اور لاہور میں کسی بھی جگہ یا دفتر کے باہر پولیس فورس کی وجہ سے کوئی شاہراہ بند نہیں ہے۔ آئی جی پنجاب نے افسران کو ہدایت دیتے ہوئے کہا کہ عدالتی احکامات کی روشنی میں موثر حکمت عملی کے تحت سیکیورٹی اقدامات کا سلسلہ جاری رکھا جائے اور عوام کے جان و مال اور عزت و آبرو کے تحفظ کیلئے جرائم پیشہ اور سماج دشمن عناصر کے خلاف جاری کریک ڈاؤن میں مزید تیزی لائی جائے۔

مزید : علاقائی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...