سینیٹ انتخابات میں حصہ لینے والے امیدواروں کے اثاثہ جات سمیت دیگر تفصیلات طلب

سینیٹ انتخابات میں حصہ لینے والے امیدواروں کے اثاثہ جات سمیت دیگر تفصیلات ...

لاہور(نامہ نگار خصوصی )سینٹ انتخابات 2018 ء میں حصہ لینے والے امیدواروں کے اثاثہ جات سمیت دیگر تفصیلات طلب کرنے کے لئے چیف الیکشن کمشن کو خط لکھ دیا گیا ہے ۔خط ایکٹوازم پینل کے سربراہ اظہر صدیق ایڈووکیٹ کی جانب سے لکھا گیا ہے ،خط کی کاپی چیف الیکشن کمشن صدر مملکت اور دیگر کو بھجوائی گئی ہے ،خط میں کہا گیا ہے کہ سرکاری عہدہ چھوڑنے کے دو سال تک کوئی شخص سینٹ کا الیکشن نہیں لڑ سکتا خط میں نشاندہی کی گئی ہے کہ اوورسیز کمشنر شاہین بٹ،زبیر گل ،نصیر بھٹہ سابق چیف انفارمیشن کمشنر اور دیگر انتخابات لڑنے کے اہل نہیں ،خط میں قانونی نکتہ اٹھایا گیا ہے کہ آئین کے آرٹیکل 63 (1)کے تحت سرکاری عہدہ چھوڑنے والا شخص 2 سال تک انتحابات نہیں لڑ سکتا جبکہ الیکشن ایکٹ 2017ء کے تحت کاغذات نامزدگی کے فارم اے اور بی میں سیاستدانوں کو اثاثے چھپانے کی اجازت دی گئی ہے ،الیکشن ایکٹ میں ترمیم کے بعد سیاستدان کو قرضے، فوجداری مقدمات، دہری شہریت چھپانے کی اجازت دے دی گئی ہے ۔خط میں الزام لگایا گیا ہے کہ الیکشن ایکٹ میں ترمیم آئین کے آرٹیکل 62اور 63کا اثر زائل کرنے کے لئے کی گئی خط میں کہا گیا ہے کہ آئین کے آرٹیکل 19 (اے )کے تحت معلومات تک رسائی ہرشہری کا حق ہے خط میں استدعا کی گئی ہے کہ امیدواروں کے قرضے، فوجداری مقدمات، دہری شہریت اور اثاثہ جات کی تفصیلات دی جائیں۔

مزید : صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...