اسحق ڈار کے کاغذات مسترد ہونے کیخلاف اپیل کرینگے ،مسلم لیگ (ن)

اسحق ڈار کے کاغذات مسترد ہونے کیخلاف اپیل کرینگے ،مسلم لیگ (ن)

اسلام آباد (این این آئی،آن لائن )وزیر مملکت برائے اطلاعات و نشریات مریم اور نگزیب نے کہا ہے کہ اسحاق ڈار کے کاغذات نامزدگی بے بنیاد وجہ پر مسترد کیے گئے ٗفنی اعتراضات کی بنیاد پر اسحاق ڈار کے کاغذات نامزدگی کو مسترد کرنے کو قانونی طور پر درست نہیں سمجھتے ٗ اسحاق ڈار قائد محمد نواز شریف کے سپاہی ہیں, ہر فورم پر ڈٹ کر مقابلہ کریں گے۔مریم اورنگزیب نے کہا کہ اسحاق ڈار نے دو کاغذات نامزدگی جمع کرائے تھے۔مریم اورنگزیب نے کہا کہ کاغذات نامزدگی کے مطابق الیکشن کیلئے ایک بینک اکاوَنٹ کھولنا ضروری ہے۔مریم اورنگزیب نے کہا کہ ریٹرننگ آفیسر نے محض اس بنیاد پر کاغذات نامزدگی مسترد کیے کہ دو کاغذات نامزدگی کیلئے دو الگ الگ بینک اکاوَنٹس ہونے چاہئیں ۔ انہوں نے کہاکہ اس طرح کی کوئی شق قانون میں موجود نہیں ہے اور علیحدہ بینک اکاوَنٹ کی ضرورت ایک الیکشن کیلئے ہے، ہر کاغذات نامزدگی کے لیے نہیں انہوں نے کہاکہ اسحاق ڈار نے اس فیصلے کے خلاف اپیل میں جانے کا فیصلہ کیا ہے۔دوسری طرف سابق وزیر خزانہ اسحق ڈار نے کہا ہے کہ سینیٹ کی نشست پر نامزدگی فارم مسترد ہونے پر حیرانگی ہے‘ تفصیلی فیصلہ ملے تو اپیل کروں گا ،دعا ہے کہ جلد صحت یاب ہوکر وطن واپس آؤں۔ نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے اسحاق ڈار نے کہا کہ 11 جنوری کو میرا علاج شروع ہوا تھا ڈاکٹر نے 6 ہفتے کا وقت دیا تھا۔ انہوں نے کہاکہ میرے وکلاء نے مجھے بتایا ہے کہ میں نے جنرل نشست سے کاغذات نامزدگی واپس لیے تھے اور ٹیکنو کریٹ سیٹ پر سینیٹ انتخابات میں حصہ لیتاہوں میرے نامزدگی فارم صرف ایک اکاؤنٹ نمبر لکھنے کی وجہ سے مسترد کئے گئے ہیں جو سمجھ سے بالاتر ہے اور وکلاء بھی اس پر ہنس رہے ہیں اس پر اپیل کریں گے انہوں نے کہا کہ قانونی طور پر میرے دونوں نامزدگی فارم مسترد نہیں ہوسکتے ایک فارم کو مسترد کر سکتے ہیں بلکہ ایک کو تو واپس ہونا ہے۔

مسلم لیگ (ن)

مزید : صفحہ اول