میپکو ، بجلی چوروں کو پکڑنے کیلئے سٹاف کو گینگ بناکر فیلڈ میں نکلنے کاحکم

میپکو ، بجلی چوروں کو پکڑنے کیلئے سٹاف کو گینگ بناکر فیلڈ میں نکلنے کاحکم

ملتان (سٹاف رپورٹر) میپکو چیف نے بجلی چوروں کو پکڑنے کے لئے افسروں اور اہلکاروں کوگینگ بنا کرفیلڈ میں نکلنے کا حکم دے دیا ہے۔ چیف ایگزیکٹو آفیسر میپکو انجینئر محمد اکرم (بقیہ نمبر47صفحہ7پر )

چوہدری نے کہاہے کہ لائن لاسز پر کنٹرول نہ کرنے والے افسران ملازمت سے ہاتھ دھو بیٹھیں گے ۔ وزارت توانائی ہر افسر کی کارکردگی کو نہایت باریک بینی سے مانیٹرکررہی ہے اور مطلوبہ نتائج نہ دینے والے افسران کے خلاف سخت کاروائی کرے گی ۔ رحیم یار خان اور بہاولپور سرکلوں کے افسران کے الگ الگ اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ انتظامی طورپر بھی لائن لاسز کم کرنے کی زیادہ ضرورت ہے ۔ فیلڈ افسران بجلی چوری پکڑنے پر توجہ مرکوز رکھیں اگر چورکو چور کہنے اور اس کے خلاف کاروائی کرنے کا عزم کرلیں تو کوئی وجہ نہیں کہ لائن لاسز کنٹرول نہ ہوسکیں ۔چیف ایگزیکٹو آفیسر نے کہا کہ ہر آفیسر کے لئے وزارت اور نیپرا نے ٹارگٹس مقرر کئے ہوئے ہیں جن کے حصول میں ناکامی پر ان کے خلاف تادیبی کارروائی کی جائے گی ۔ انہوں نے کہا کہ چوروں کے خلاف مقدمات کے اندراج میں سستی نہ برتیں اور مقدمات کو رجسٹرکروانے کے لئے تمام طریقے بروئے کار لائیں اور عدالتوں سے مددلیں ۔ بجلی چوری پکڑنے کے لئے گینگ بناکر فیلڈمیں نکلیں اور روزانہ کی کارکردگی سسٹم میں فیڈ کروائیں تاکہ رزلٹس بہترہوسکیں ۔سپریٹنڈنگ انجینئر میپکو سرکل رحیم یار خان محمد افضل ندیم نے میپکو چیف کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایاکہ رحیم یار خان سرکل کمپیوٹڈ ریکوری میں دوسرے نمبر پر ہے جبکہ لائن لاسز کی شرح میں 1.5فیصدکمی کی گئی ہے ۔ ایک ماہ کے دوران بجلی چوروں کے خلاف کاروائی کرتے ہوئے 76افراد کے خلاف ایف آئی آرز درج کروائی گئی ہیں ۔ چیف ایگزیکٹو آفیسر نے کہا کہ بجلی چوروں کو عائد کی گئی ڈیٹیکشن وہی ہے جس کی ادائیگی ہوگی بغیر ادائیگی کے جرمانے افسران کے لئے صرف مسئلہ بنیں گے ۔

چیف ایگزیکٹو میپکو

مزید : پشاورصفحہ آخر /راولپنڈی صفحہ آخر /ملتان صفحہ آخر