علاقائی اخبارات کا اجراءخوش آئند ہے

علاقائی اخبارات کا اجراءخوش آئند ہے
علاقائی اخبارات کا اجراءخوش آئند ہے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

دبئی  (طاہر منیر طاہر) علاقائی اخبارات اپنے علاقوں کے مسائل اور خبروں کو بہتر طریقے سے اجا گر کر سکتے ہیں۔ جب تک آزاد کشمیر سے کوئی اخبار نہیں چھپتا تھاتب تک پاکستان کے مختلف بڑے بڑے اخبار دستیاب تھے جن میں آزادکشمیر کی خبریں کم کم ہی ملتی تھیں جبکہ آزاد کشمیر سے شائع ہونے والے اخبارات میں زیادہ کوریج علاقائی مسائل اور خبروں کو ہی دی جاتی ہے ۔اس کمی کو پورا کرنے پر آزادکشمیر کے علاقائی اخبارات اوران کے انتظامیہ مبارکباد کی مستحق ہے۔

ان خیالات کا اظہار آزاد کشمیر سے شائع ہونے والے اخبار”روزنامہ جموں وکشمیر“ کی 12 ویں سالگرہ کے موقع پر کیاجس کا اہتمام یو اے ای میں مقیم روزنامہ جموں وکشمیر کے بیوروچیف راجہ اسد اور ان کے ساتھیوں نے مل جل کرکیا تھا۔روزنامہ جموں وکشمیر کے بارھویں سالگرہ کے موقع اخبار کے ایڈیٹر عامر محبوب بھی موجو د تھے۔سالگرہ کی تقریب کے مہمان خصوصی ایڈیٹر روزنامہ کشمیر ایکسپریس کے ایڈیٹر تبسم تھے جبکہ تقریب کی صدارت اشفاق احمد صدر پی جے ایف نے کی۔

اس موقع پرسید وقار گریزی،سہیل خاور،سردار جاوید یعقوب،سید سجادحسین شاہ،فاروق چیچی،زاہدہ ملک،امجد اقبال امجداور کشمیری کمیونٹی کے بہت سے لوگ موجودتھے۔اس موقع پرمقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہ آزاد کشمیر کے اندرون اور بیرون ملک قارئین کیلئے روزنامہ جموں وکشمیر ایک تحفہ ہے جس کے ذریعے وہ علاقائی اور بین الاقوامی صورتحال سے ہر دم آگاہ رہتے ہیں۔اس وقت آزاد کشمیر سے کم و بیش چالیس سے زائد اخبارات شائع ہو رہے جو کہ کشمیریوں کی آواز کو دنیا بھر تک پہنچا رہے ہیں۔ہم امن اقدام اٹھانے پر روزنامہ جموں وکشمیر کے ایڈیٹر عامر محموب اور ان کی ٹیم کو مبارکباد پیش کرتے ہیں۔

روزنامہ جموں و کشمیر اور دیگر علاقائی اخبارات جہاں کشمیریوں کے مسائل حکام باور تک پہنچا رہے ہیں وہاں مقبوضہ کشمیر کے کشمیریوں کی بھی آواز ہیں۔مقررین نے ایڈیٹر عامر محبوب کو زبردست الفاظ میں خراجِ تحسین پیش کیا۔اس موقع پر روزنامہ جموں و کشمیر کے ایڈیٹر عامر محبوب کو بہترین صحافی انجام دینے پر اعزازی شیلڈ پیش کی گئی جبکہ امارات میں خبروں کی بہترین کوریج اور کشمیری کمیونٹی کی صحافتی خدمت کرنے پر اخبار کے بیوروچیف راجہ اسد کو بھی اعزازی شیلڈ دی گئی۔

مزید : عرب دنیا