پنجاب حکومت کا سخت رویہ مسائل کا حل نہیں‘شوگر ملز ایسوسی ایشن پنجاب زون

پنجاب حکومت کا سخت رویہ مسائل کا حل نہیں‘شوگر ملز ایسوسی ایشن پنجاب زون

لاہور(پ ر)شوگر ملز مالکان کے گزشتہ روز کے اجلاس میں شوگر انڈسٹری کو درپیش موجودہ حالات کا جائزہ لیا گیا اور ملز مالکان نے حکومت پنجاب سے پرزور اپیل کی ہے کہ شوگر انڈسٹری کا استحصال بند کیا جائے۔ اور شوگر ملز کو خوش اسلوبی سے کرشنگ سیزن مکمل کرنے دیا جائے۔ پاکستان شوگر ملز ایسوسی ایشن کے ممبران نے ضلعی انتظامیہ کی طرف سے کی جانے والی کارروائیوں پر سنگین تشویش کا اظہار کیا اور حکومت پنجاب سے ان تادیبی ہتھکنڈوں کو ملک کی معیشت کے لیے نہایت ہی غیر موزوں قرار دیا۔ چیئرمین پاکستان شوگر ملز ایسوسی ایشن پنجاب زون کا کہنا تھا کہ موجودہ معاشی حالات میں ہمارا ملک اس قسم کی کارروائیوں کا متحمل نہیں ہوسکتا۔ دوسری طرف وفاقی حکومت نے جب سے چینی کی ایکسپورٹ کی اجازت دی ہے اس وقت سے لے کر اب تک عالمی منڈی میں چینی کی قیمت مستحکم نہ ہو سکی ہے۔ شوگر انڈسٹری نے بہت پہلے سے حکومت سے ایکسپورٹ کی اجازت مانگی تھی۔

مگر حکومت کی طرف سے اجازت کا یہ سارا سراسیس لیت و لعل کا شکار ہوتا رہا یہاں تک کہ ملز چلوانے کے لیے پنجاب حکومت نے بہت سے وعدے کیے مگر ان میں اب تک ایک بھی پایہ تکمیل تک نہ پہنچا۔ اس وقت کی موجودہ صورتحال حکمرانوں کے سامنے کئی بار بیان کی جا چکی ہے۔ مگر ابھی تک مسائل کا حل نہیں نکلا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ وزیر اعظم جناب عمران خان صاحب اور وزیر اعلیٰ پنجاب جناب عثمان بزدار صاحب کو ذاتی دلچسپی لے کر ان معاملات کو حل کروانا ہوگا تاکہ کاروباری سرگرمیاں تعطل کا شکار نہ ہونے پائیں اور شوگر انڈسٹری کا اعتماد بحال رہے۔

مزید : کامرس