سانحہ ساہیوال،مقتول خلیل کے بچوں کو بہترین تعلیمی سہولتیں دینے کا فیصلہ

سانحہ ساہیوال،مقتول خلیل کے بچوں کو بہترین تعلیمی سہولتیں دینے کا فیصلہ

لاہور(آن لائن)سانحہ ساہیوال میں سی ٹی ڈی اہلکاروں کی گولیوں کا نشانہ بننے والے مقتول خلیل کے بچوں کو بہترین تعلیمی سہولیات فراہم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے جبکہ مقتول خلیل کے اہل خانہ کو صحت کی مفت سہولیات فراہم کرنے کا بھی فیصلہ کر لیا گیا ہے۔ سانحہ ساہیوال کے مقتول خلیل کے متاثرہ خاندان کے دیگرمسائل حل کرنے کے لئے بھی حکومت اپنا تعاون جاری رکھے ہوئے ہے۔اسی تعاون کے تحت سانحہ ساہیوال میں سی ٹی ڈی کی گولیوں کا نشانہ بننے والے خلیل کے بچوں کو بہترین سکولوں میں داخل کروا کر انہیں بہترین تعلیمی سہولیات فراہم کی جائیں گی جبکہ خلیل کے اہل خانہ کو بھی صحت کی مفت سہولیات فراہم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ یاد رہے کہ سانحہ ساہیوال کے بعد وزیراعلی پنجاب سردار عثمان بزدار ہسپتال میں زیر علاج زخمی بچے عمیر کی عیادت کے لیے گئے جہاں انہوں نے بچوں کی کفالت کرنے اور ان کے اخراجات اٹھانے کا اعلان کیا تھا جس کے بعد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر قانون راجہ بشارت نے حکومت کی جانب سے متاثرہ خاندان کے لواحقین کے لیے 2 کروڑ روپے کا اعلان بھی کیا تھا اور کہا تھا کہ حکومت نے متاثرہ خاندان کی امداد اوربچوں کے تعلیمی اخراجات اٹھانے کا اعلان کیا لیکن مالی امدادکسی انسانی زندگی کا مداوا نہیں۔حکومت خلیل کے بچوں کوتنہا نہیں چھوڑے گی۔

مزید : صفحہ آخر