8مارچ کو قلعہ قاسم باغ پر ختم نبوت کانفرنس‘ تیاریاں شروع

  8مارچ کو قلعہ قاسم باغ پر ختم نبوت کانفرنس‘ تیاریاں شروع

  



ملتان (سٹی رپورٹر)عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے زیر اہتمام تاریخ ساز ختم نبوت کانفرنس کا انعقاد 6مارچ کو اسٹیڈیم قلعہ کہنہ قاسم باغ ملتان میں کیا جارہا ہے۔ کانفرنس سے(بقیہ نمبر53صفحہ12پر)

شیخ الاسلام مفتی محمد تقی عثمانی، قائد جمعیت مولانا فضل الرحمن، مولانا پیر ذوالفقار احمد نقشبندی، مولانا قاری محمد حنیف جالندھری، علامہ اویس شاہ نورانی، علامہ ساجد میر، جناب لیاقت بلوچ، مولانا ضیاء اللہ شاہ بخاری اور دیگر جید علماء کرام، سیاسی و سماجی کارکنان سمیت دانشور، وکلاء، تاجر حضرات بھرپور شرکت کریں گے۔ عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے مرکزی رہنما مولانا عزیز الرحمن جالندھری، مولانا اللہ وسایا اور مولانا محمد اسماعیل شجاع آبادی کانفرنس کی سرپرستی میں منعقد ہوگی۔ گزشتہ روز مولانا اللہ وسایا نے رشید آباد ملتان میں علماء کنونشن سے خطاب فرماتے ہوئے کہا کہ عقیدہ ختم نبوت کے تحفظ کے لیے عوام میں شعور بیدار کرنا ضروری ہے قادیانی آئے روز نئے طریقوں سے عوام الناس کو گمراہ کرنے کی کوششوں میں مصروف ہیں ہمیں اپنے مسلمان بھائیوں کے ایمانوں کو بچانا ہے اور قادیانیوں کو دعوت اسلام دینی ہے تاکہ وہ بھی جنت کے حق دار بن سکیں۔ مولانا محمد انس نے بھی کنونشن میں شرکت فرمائی۔ انہوں نے قادر پور راواں میں بھی ختم نبوت کنونشن سے خطاب فرمایا۔ مولانا قاضی احسان احمد نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ قادیانی مسلمانوں میں بگاڑ پیدا کرنے کی کوشش میں ہمہ وقت اور ہمہ جہت مصروف عمل ہے جس سے اسلام اور پاکستان دونوں کو شدید خطرات لاحق ہیں حکمرانوں کی اولین ذمہ داری ہے کہ وہ آئین پاکستان کی روشنی میں غیر شرعی اور غیر آئینی سرگرمیوں کو سدباب کرے۔ مولانا محمد وسیم اسلم ضلعی مبلغ عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت نے حسن آباد خانیوال روڈ، چالیس فٹی بازار سمیجہ آباد اور لوہا مارکیٹ اندرون شہر سمیت مختلف مقامات پر علماء کنونشن سے خطابات کرتے ہوئے کہاکہ موجودہ حکومت بیرونی ایجنڈے پر عمل پیرا ہے وہ ناموس رسالت قانون میں تبدیلی کا کوئی موقع ضائع نہیں کر تی۔مذہب بیزار حکمرانوں کو یہ بات یاد رکھنی چاہئے کہ پاکستانی قوم تحفظ ناموس رسالت پر مرمٹنے کے لئے ہر وقت تیار ہے۔

تیاریاں

مزید : ملتان صفحہ آخر