جمشیددستی کیخلاف مقدمہ‘ زکریا یونیورسٹی کے مین گیٹ پر سٹوڈنٹس کا احتجاجی مظاہرہ‘ نعرے بازی

  جمشیددستی کیخلاف مقدمہ‘ زکریا یونیورسٹی کے مین گیٹ پر سٹوڈنٹس کا احتجاجی ...

  



ملتان (سٹی رپورٹر)عوامی سٹوڈنٹس فیڈریشن کے زیراہتمام قائد جمشید دستی پر آئل ٹینکر ڈکیتی کے بے بنیاد جھوٹے مقدمہ کے خلاف بہاؤالدین زکریا یونیورسٹی کے مین گیٹ پر طلبہ کارکنوں نے احتجاجی (بقیہ نمبر50صفحہ12پر)

مظاہرہ کیا اور انہیں فی الفور رہاکرنے کا مطالبہ کیا گیا اس موقع پر مظاہرین کا کہنا تھا کہ عوامی راج پارٹی کے سربراہ جمشید دستی کو سیاسی انتقام کا نشانہ بنایا گیا اور سیاسی وفاداری تبدیل کرنے پر دباؤ ڈالا گیا اور انہیں سیاسی سرگرمیوں جاری نہ رکھنے پر زور دیا گیا جس کی جتنی مذمت کی جائے وہ کم ہے ان کا کہنا تھا مہ جمشید دستی مقدمہ کے پیچھے ایک اعلی حکومتی شخصیت ہے جس کے ایماء پر پولیس جمشید دستی کو علاج معالجے کی سہولت بھی فراہم نہ کر رہی ہے اور انہیں تشدد کا نشانہ بنایا جارہا ہے حالانکہ ڈاکٹرز نے ہدایت کی ہے کہ اگر جمشید دستی کا فورا گردے کا آپریشن نہ کروایا گیا تو ان کی جان کو خطرات لاحق ہو سکتے ہیں انہوں نے مطالبہ کیا کہ جمشید دستی کو فی الفور رہاکیاجائے اور ان پر درج جھوٹے،بے بنیاد مقدمات خارج کئے جائیں بصورت دیگر عوامی سٹوڈنٹس فیڈریشن بھرپور احتجاج پر مجبور ہو جائے گا سرائیکی وسیب کے لاکھوں لوگ ان کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں۔

مظاہرہ

مزید : ملتان صفحہ آخر