موت قبول لیکن دوبارہ پیپلزپارٹی میں نہیں جاؤں گا، ذوالفقار مرزا

  موت قبول لیکن دوبارہ پیپلزپارٹی میں نہیں جاؤں گا، ذوالفقار مرزا

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر) سابق وزیر داخلہ سندھ ذوالفقار مرزانے کہا ہے کہ قیاس آرئیاں ہورہی ہیں کہ میں پیپلزپارٹی جارہاہوں، موت قبول کرسکتاہوں لیکن دوبارہ پیپلزپارٹی نہیں جاؤں گا۔ مراد علی شاہ سے پوری سندھ اسمبلی نفرت کرتی ہے، ان کو کرپشن کرنے کیلئے رکھا گیا ہے۔ سابق وزیر داخلہ سندھ ذوالفقار مرزا نے بدھ کو جاری اپنے بیان میں کہا کہ پیپلز پارٹی کے سندھ میں بہت زیادہ بے چینی پائی جاتی ہے، ماضی میں مجھ سمیت ساتھیوں پرکئی مقدمات کئے گئے تھے، قیاس آرئیاں ہورہی ہیں کہ میں پیپلزپارٹی جارہاہوں، میں کبھی چور پارٹی میں دوبارہ نہیں جاؤں گا۔ذوالفقار مرزا نے کہا کہ میں آج تک پیپلزپارٹی سے لڑ رہاہوں، موت قبول کرسکتاہوں دوبارہ پیپلزپارٹی نہیں منتخب کروں گا، بلاول بھٹو میرے لیے قابل عزت ہے اور آصف زرداری بلاول کامستقبل تباہ کررہے ہیں۔آئی جی سندھ کی تبدیلی کے حوالے سے سابق وزیر داخلہ سندھ نے کہا کہ آج کل آئی جی کی تبدیلی کی ہوا چل رہی ہے، کسی کی بھی خواہش سے آئی جی تبدیل نہیں ہوناچاہیے، ماضی کے افسروں کی نسبت کلیم امام ایک ایماندارافسر ہیں، وہ سندھ حکومت کیکرپشن کاحصہ دارنہیں بننا چاہتا، اقبال محمود صاحب کو نکال دیاگیا سب جانتے ہیں کیا قصور تھا۔انہوں نے کہا کہ مراد علی شاہ سے پوری سندھ اسمبلی نفرت کرتی ہے، ان کو کرپشن کرنے کیلئے رکھا گیا ہے، مرادعلی شاہ زرداری کے دوستوں کواربوں روپے نکال کردے سکتا ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر