کراچی،40دن میں 1300 لوگوں کو کتوں نے کاٹ لیا

کراچی،40دن میں 1300 لوگوں کو کتوں نے کاٹ لیا

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر)شہرقائد میں آوارہ کتوں سے تاحال شہری غیر محفوظ ہیں، جناح اسپتال کی ایگزیکٹو ڈائریکٹر ڈاکٹر سیمی جمالی نے انکشاف کیا ہے کہ جنوری 2020 سے 10 فروری تک کتے کے کاٹنے کے 1300 افراد کو اسپتال لایا گیا، جن میں سے3 افراد زندگی کی بازی ہارگئے۔کراچی میں محلہ محلہ، گلی گلی آوارہ کتے دندنانے لگے، شہریوں کو کاٹنے کے واقعات میں بھی روز بروز اضافہ ہوتا جارہا ہے۔جناح اسپتال شعبہ ایمرجنسی کی انچارج ڈاکٹر سیمی جمالی نے انکشاف کیا ہے کہ نئے سال کے صرف 40 دن کے دوران کتوں کے کاٹنے کے 1300 سے زائد مریض اسپتال لائے گئے، جن میں سے 3 افراد جاں بحق ہوچکے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ گزشتہ سال جناح اسپتال میں کتے کے کاٹنے کے 12 ہزار 500 سے زائد مریض لائے گئے تھے۔ڈاکٹر سیمی جمالی نے بتایاکہ کتے کے کاٹنے کے واقعات بہت زیادہ بڑھ چکے ہیں، پاگل جانوروں کی آبادی تیزی سے بڑھ رہی ہے، اب اس کو کنٹرول کرنے کیلئے اقدام اٹھانا ضروری ہے۔انہوں نے بتایا کہ کسی جانور کو اگر ریبیز ہوجائے تو وہ 7 دن میں مرجاتا ہے۔

مزید : صفحہ اول