صوبائی حکومت خاندانی منصوبہ بندی پر 20ملین خرچ کرگی: احمد حسین شاہ

  صوبائی حکومت خاندانی منصوبہ بندی پر 20ملین خرچ کرگی: احمد حسین شاہ

  



پشاور(سٹاف رپورٹر)وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا کے معاون خصوصی برائے بہبود آبادی سید احمد حسین شاہ نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت خاندانی منصوبہ بندی پر 20 ملین روپے خرچ کرے گی، بڑھتی ہوئی آبادی پر قابو پانے کے لئے جامع منصوبہ بندی کی جا رہی ہے، موجودہ حکومت آبادی اور وسائل میں توازن پیدا کرنے کے لئے پر عزم ہے۔ ان خیالات کا اظہار معاون خصوصی نے بدھ کے روز پشاور میں ڈیلیورنگ ایکسلاریٹڈ فیملی پلاننگ ان پاکستان، پبلک سیکٹر سروس ڈیلیوری (ڈاف پاک پی ایس ایس ڈی)پراجیکٹ کے تعارفی اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اجلاس میں وزیر اعلیٰ کے مشیر برائے سائنس ٹیکنالوجی و آئی ٹی ضیاء اللہ بنگش، ممبران صوبائی اسمبلی آسیہ خٹک، ڈاکٹر آسیہ، عائشہ بانو اور نثار مہمند کے علاوہ سیکرٹری بہبود آبادی اصغر علی، ڈائریکٹر جنرل بہبود آبادی، محکمہ صحت کے حکام اورغیر سرکاری تنظیموں کے عہدیداران نے بھی شرکت کی۔اس موقع پر معاون خصوصی احمد حسین شاہ نے، حکومت کی جانب سے تمام غیر سرکاری تنظیموں کو خاندانی منصوبہ بندی کے شعبہ میں تعاون کی یقین دہانی کرائی۔ معاون خصوصی نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مشترکہ مفادات کونسل کی سفارشات کی روشنی میں وفاقی اور صوبائی سطح پر آبادی کو کنٹرول کرنے کے ٹاسک فورسز اور کمیٹیاں قائم کی گئی ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ پورے صوبے میں 700 پلاننگ سنٹرز قائم ہیں جنہیں مستقبل میں مزید بڑھایا جائے گا۔ دریں اثنا ء معاون خصوصی نے صوبائی اسمبلی میں خاندانی منصوبہ بندی کے موضوع پر بحث کرانے اور آبادی پر قابو پانے کے لیے مزید قانون سازی کرنے کا عزم بھی ظاہر کیاہے۔ انہوں نے کہا کہ فیملی پلاننگ کے لئے عوامی آگاہی ضروی ہے جس کے لئے حکومت نتیجہ خیز حکمت عملی تشکیل دے رہی ہے۔ اس موقع پر ضیاء اللہ بنگش نے کہا کہ موجودہ حکومت پرا ئیوٹ سیکٹر کے اشتراک سے عوام کو سہولیات ان کے گھر کی دہلیز پر فراہم کرنے میں خصوصی دلچسپی لے رہی ہے اور بہت جلد وزیر اعظم عمران خان کے ڈیجیٹل پاکستان منصوبے کے تحت تمام سیکٹرز کو ڈیجیٹلائز کیا جائے گا۔اجلاس کے دوران شرکاء کو صوبے میں سر کاری شعبے میں صحت اور خاندانی منصوبہ بندی کی سہولیات کو بہتر بنانے کے لئے پروجیکٹ کے بارے میں تفصیلی بریفنگ بھی دی گئی۔ مذکورہ منصوبہ پلیڈیم انٹرنیشنل پاکستان اور حکومت برطانیہ کے محکمہ برائے بین الاقوامی ترقی کے اشتراک سے عمل میں لایا گیا ہے جو حکومت خیبرپختونخوا کے شعبہ صحت اور بہبود آبادی کے ساتھ مل کر کام کرے گا۔ڈاف پاک پی ایس ایس ڈی منصوبے کے عمومی مقاصد میں خاندانی منصوبہ بندی کی خدمات کو روزمرہ کی صحت کی خدمات میں شامل کرنا اور صحت کی دیکھ بھال کی سہولیات فراہم کرنے والے طبی عملے کو سکریننگ، مشاورت اور حوالہ جات سمیت خاندانی منصوبہ بندی کی موثر خدمات فراہم کرنے کے لئے تربیت مہیا کرنا ہے۔علاوہ ازیں یہ منصوبہ صحت کی دیکھ بھال کرنے والے طبی عملے کی مہارت اور معلومات کو بہتر بنا کر اسقاط حمل کے بعد کی سہولیات کی فراہمی کو بھی یقینی بنائے گا اور صوبے میں خاندانی منصوبہ بندی کی صورتحال پر موثر انداز سے نگرانی کے لیے صوبائی حکومت کے محکمہ صحت اور بہبود آبادی کے ڈیٹا بیس کو مستحکم کرنے میں بھی معاونت کرے گا۔ مذکورہ منصوبہ صوبائی محکمہ صحت بہبود آبادی غیر سرکاری تنظیموں اور تکنیکی ماہرین کے مابین ہم آہنگی کو یقینی بنانے کے لیے صوبائی ٹیکنیکل ایڈوائزری گروپ کو بھی تشکیل دے گا جو رابطہ کاری کے مرکزی فورم کے طور پر کام کرے گا اور ثبوت کی بنیاد پر مبنی فیصلہ سازی اور منصوبہ بندی کے لیے مانیٹرنگ اور رپورٹنگ میں بہتری لانے کے لئے بھی سہولیات فراہم کرے گا

مزید : صفحہ اول