بھارت میں ماں اپنے بیٹے کے خلاف بیٹی سے ساتھ جنسی زیادتی کا مقدمہ درج کروانے پولیس کے پاس پہنچ گئی ، کیا کہانی ہے ؟ جان کر آپ بھی توبہ توبہ کریں گے

بھارت میں ماں اپنے بیٹے کے خلاف بیٹی سے ساتھ جنسی زیادتی کا مقدمہ درج کروانے ...
بھارت میں ماں اپنے بیٹے کے خلاف بیٹی سے ساتھ جنسی زیادتی کا مقدمہ درج کروانے پولیس کے پاس پہنچ گئی ، کیا کہانی ہے ؟ جان کر آپ بھی توبہ توبہ کریں گے

  



کانپور (ڈیلی پاکستان آن لائن )بھارتی ریاست اتر پردیش کے ضلع کانپور میں ایک ماں اپنے بیٹے کے خلاف بیٹی سے جنسی زیادتی کی کوشش کا مقدمہ درج کروانے پولیس کے پاس پہنچ گئی ۔

تفصیلات کے مطابق یہ واقع اس وقت سامنے آیا جب خاتون نے ڈی آئی جی سے رابطہ کیا اور اپنے بیٹے کے خلاف بیٹی سے زیادتی کی کوشش کا مقدمہ درج کرنے کیلئے کہا ۔پولیس ذرائع کا کہناہے کہ یہ خاندان کانپور میں بابو پورہ پولیس سٹیشن کی حدود میں رہائش پذیر ہے ، بیٹا تیسرے نمبر پر ہے جبکہ جس بہن کے ساتھ اس نے مبینہ طور پر زیادتی کی کوشش کی وہ سب سے چھوٹی اور پانچویں نمبر پر ہے ۔

لڑکی کی ماں کا کہناتھا کہ معتدد بار اس کے بیٹے نے بیٹی کے کمرے میں جا کر اس کی عزت پر ہاتھ ڈالنے کی کوشش کی اور شدید بحث بھی کی ، جب اس نے انکار کر دیا تو بیٹے نے بیٹی کو سنگین نتائج کی دھمکی دینا شروع کر دی ۔

خاتون نے اپنی شکایت میں موقف اختیار کیا ہے کہ جب لڑکی نے اپنے سسرال والوں کو بتانے کی کوشش کی تو انہوں نے اس پر کوئی توجہ نہیں دی ، ایک مرتبہ تو اس نے جنسی زیادتی میں رکاوٹ بننے پر ماں اور بہن کے ساتھ کھینچا تانی بھی کی ، اس نے اپنی ماں کو دھمکی دی کہ اگر اسے خواہش پوری نہ کرنے دی گئی تو وہ اپنی بہن کی شادی کی راہ میں رکاوٹ ڈالے گا ۔

لڑکی کی ماہ نے اپنے بیان میں یہ بھی بتایا کہ شادی کے فوری بعد بیٹی کو اس کے سسر کی جانب سے بھی جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا اور جب اس نے اپنا احتجاج ریکارڈ کروانے کی کوشش کی تو اسے خاموش رہنے کیلئے کہا گیا اور برداشت کرنے کو کہا ۔ڈی آئی جی آننت دیو نے کہا ہم نے شکایت متعلقہ افسر کے حوالے کر دی ہے ، تحقیقات کے بعد ملزم کے خلاف الزامات درست پائے گئے تو کارروائی شروع کریں گے اور اسے مقدمہ درج کر نے کے بعد جیل بھیجیں گے ۔

مزید : بین الاقوامی