فوڈ اتھارٹی ٹیمیں سرگرم، دکانوں کی چیکنگ، جرمانے، وارننگ

  فوڈ اتھارٹی ٹیمیں سرگرم، دکانوں کی چیکنگ، جرمانے، وارننگ

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

ملتان، ڈیرہ غازیخان(نیوز رپورٹر، بیورو رپورٹ) ڈائریکٹر جنرل پنجاب فوڈ اتھارٹی کی ہدایت پر خوراک کے کاروبار کو بہتر بنانے کیلئے کارروائیاں جاری ہیں۔ تفصیلات کے مطابق پل برکت آباد قادر پور راں میں ملک شاپ کو ملاوٹی اور کم فیٹ والا دودھ فروخت کرنے پر 10 ہزار روپے جرمانہ کیا گیا۔ اسی طرح تلمبہ روڈ میاں چنوں میں زائدالمیعاد مصالحہ جات فروخت کرنے، خوراک کی نامناسب سٹوریج ہونے پر سپر سٹور کو 12 ہزار روپے جرمانہ کر دیا گیا۔ اس کے علاہ اڈہ خالق آباد کبیر والا میں بیکری کو خوراک کی تیاری میں رنگ کاٹ، کھلے مصالحہ جات(بقیہ نمبر44صفحہ7پر)

 کا استعمال کرنے پر 10 ہزار روپے جرمانہ عائد کیا گیا۔ مزید گگو منڈی بورے والا میں کچن ایریا میں حشرات کی بھرمار ہونے، ورکرز کے میڈیکلز سرٹیفکیٹس کی عدم موجودگی ہونے پر میرج ہال کو 15 ہزار روپے جرمانہ کیا گیا۔ مزید برآں بورے والا میں سپر سٹور کو ایکسپائری مشروبات فروخت کرنے پر، برفی میں سٹارچ کیمیکل کی ملاوٹ ثابت ہونے پر 12 ہزار روپے جرمانہ کیا گیا۔ علاہ ازیں بورے والا میں باسی سبزیوں کا استعمال کرنے، صفائی کے انتہائی ناقص انتظامات پر ہوٹل کو 10 ہزار روپے جرمانہ عائد کر دیا گیا۔ فوڈ سیفٹی ٹیم نے کلمہ چوک تونسہ شریف میں واقع ہوٹل کو ورکرز کے میڈیکلز سرٹیفکیٹس نہ ہونے،صفائی کے انتہائی ناقص انتظامات پر 10 ہزارروپے جرمانہ عائد کردیااسی طرح مین بازار علی پور،محلہ بخاری والا میں 3 ملک شاپس کو پانی ملا دودھ بیچنے،دودھ کی خریدوفروخت کا کوئی ریکارڈ موجود نہ ہونے پر 32 ہزارروپے کے جرمانے عائد کر دیے گئے۔اس کے علاوہ گرڈ چوک جتوئی میں ڈسٹری بیوٹر یونٹ کو ناقابلِ سراغ پاپڑ فروخت کرنے پر 15 ہزار جبکہ قصبہ گجرات کوٹ ادو میں بیکری یونٹ کو خوراک کی تیاری میں ناقابلِ سراغ اجزاء کی ملاوٹ کرنے،کھانے پینے کی اشیاء زمین پر سٹور کرنے پر 12 ہزار اور جتوئی میں ہسپتال کنٹین کو غیر معیاری کیک رس بیچنے پر 10 ہزارروپے جرمانہ کر دیا گیامزید جام پور میں معروف ریسٹورنٹ کو کھانوں کی تیاری ملاوٹی مصالحوں کا استعمال کرنے اور ایکسپائری بریڈ فروخت کرنے پر 30 ہزارروپے جرمانہ عائد کیا گیااس موقع پر ڈی جی پنجاب فوڈ اتھارٹی محمد عاصم جاوید کا کہنا تھا کہ روزانہ کی بنیاد پر ہر چھوٹے بڑے کاروبار کو چیک کیاجارہاہے۔