بد ترین لوڈ شیڈنگ جاری، پیداوارطلب کے آدھے کے برابر ہو گئی

بد ترین لوڈ شیڈنگ جاری، پیداوارطلب کے آدھے کے برابر ہو گئی

لاہور(کامرس رپورٹر)ملک میں بجلی کی ڈیمانڈ میں اضافہ کے باعث ایک بار پھر بد ترین لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ شروع ہو گیا گزشتہ روز ہفتہ وار تعطیل کے بعد معمول کی سرگرمیاں شروع ہونے سے ڈیمانڈ میں اضافہ ہوا ۔ دوسری جانب پیداوار کم ہو کر ڈیمانڈ کے آدھے کے برابر ہو گئی ۔ دوسری جانب پی ایس او نے آنے والے دنوں میں سپلائی میں مزید کمی کرنے کا الٹیمیٹم دے دیا ہے ۔ پی ایس او کے پاس صرف دو دن کا تیل رہ گیا ہے ۔ گزشتہ روز شہروں میں پندرہ گھنٹے اور دیہی علاقوں میں بیس گھنٹے تک کی لوڈ شیڈنگ کی گئی ۔ مرمت کے نام پر تمام سب ڈویژنوں میں تین فیڈرز اٹھ سے دس گھنٹے تک کے لئے بند رکھے گئے ۔ رات کو ڈیمانڈ میں اضافہ پر کئی علاقوں میں ایک گھٹنے کے بعد تین تین گھنٹوں تک کی بھی لوڈ شیڈنگ کی گئی ۔ انرجی مینجمنٹ سیل کے ذرائع کے مطابق گزشتہ روز بجلی کی مجموعی ڈیمانڈ 13460 میگا واٹ جبکہ پیداوار 6940 میگا واٹ رہی طلب و رسد میں 6520 میگا واٹ کا فرق رہا۔

لوڈ شیڈنگ

مزید : صفحہ آخر