دہشتگردی روکنے کیلئے حکومت نے سنجیدہ رویے کا ثبوت دیا ،سراج الحق

دہشتگردی روکنے کیلئے حکومت نے سنجیدہ رویے کا ثبوت دیا ،سراج الحق

                    لاہور (سٹاف رپورٹر) امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق نے کہا ہے کہ حکومت سکولوں اور کالجوں کی دیواریں اونچی کرنے اور لوگوں کو بندوق بردار چوکیدار رکھنے کا پابند بنارہی ہے مگر عوام کے تحفظ کیلئے خودکچھ کرنے کو تیار نہیں ،دہشت گردی اور بدامنی کو روکنے کیلئے حکومت نے کبھی سنجیدہ رویے کا ثبوت دیا اورنہ ایسے اقدامات کئے ہیںجن سے پتہ چلے کہ حکومت واقعی دہشت گردی روکنا چاہتی ہے ،قاتل اور ڈاکو دندناتے پھرتے ہیں ،خوف اور دہشت نے عوام کی نیند یں حرام کردی ہیں مگر حکمران خواب خرگوش کے مزے لے رہے ہیں ،حکمرانوں کا رویہ ثابت کرتا ہے کہ انہیں عوام کے اندر پائی جانے والی شدید بے چینی اور عدم تحفظ کے احساس کی ذرہ برابر پرواہ نہیں ۔اسلام اور مدارس کو دہشت گردی کے مرتکب ٹھہرانے والوں نے گزشتہ 68سال سے قوم پر بدترین دہشت گردی مسلط کررکھی ہے ،لا الہ الا اللہ کے نعرہ پر وجود میں آنے والی مملکت میں ایک دن کیلئے اسلام کے عادلانہ نظام کو نافذ نہیں کیا گیا ۔قوم نے 35سال مارشل لاءاور باقی عرصہ جاگیر داروں اور سرمایہ داروں کو بھگتا مگر ایک دن کیلئے سکون نصیب نہیں ہوا جبکہ بد امنی کا سارا الزام عوام کے صدقات پر چلنے والے مدارس کے بے ضرر طلباءپر دھر دیا جاتا ہے۔وہ پیر کو یہاں جامع مسجد منصورہ میں جماعت اسلامی لاہور کے زیر اہتمام منعقدہ سیرت النبی کانفرنس سے خطاب کررہے تھے ۔

مزید : صفحہ اول