لاہور ، قتل کے مقدمات میں ملوث 500اشتہاریوں کو پولیس گرفتار نہ کر سکی ، تھانیداروں پر منتھلی لینے کا الزام

لاہور ، قتل کے مقدمات میں ملوث 500اشتہاریوں کو پولیس گرفتار نہ کر سکی ، ...

 لاہور (شعیب بھٹی)صو با ئی دا ر الحکومت میں واقع 6ڈویژنز میں قتل کے مقد مات میں ملو ث تقریباً500 اشتہاریوں کوپو لیس تاحال گرفتا ر نہیں کر سکی ہے ۔ذرا ئع کا کہنا ہے کہ مذ کو ر ہ اشتہا ر ی اپنے ر ہا ئشی علاقوں کے متعلقہ تھانو ں میں ایس ایچ اوز سمیت انچا ر چ انویسٹی گیشن کو مبینہ طو ر پر منتھلی د یتے ہیں جس کی وجہ سے پو لیس ان ملزمان کو گرفتار نہیں کرتی ہے اور اگر انہیں کوئی گرفتار کرنے کے لئے چھاپہ مار ے تو مذکورہ پولیس اہلکار انہیں اطلاع دے کر فرار کروا دیتے ہیں، دوسری جا نب یہ اشتہاری ملزمان مقدمہ مدعی اور ان کے اہل خا نہ کوجان سے مارنے کی بھی دھمکیاں د ہتے ر ہتے ہیں تاہم پولیس پھر بھی ان کے خلاف کارروائی کرنے سے قاصر ہے ۔واضح ر ہے کہ چند ما ہ قبل مو چی گیٹ کے علاقہ میں قتل کے مقد مہ میں نا مزد ملزم نے مد عی کو سر عا م مقد مہ کی پیر وی کر نے پر قتل کردیا تھا ۔ تفصیلات کے مطابق لاہور پولیس دیرینہ دشمنی سمیت دیگر معاملات پر بے گناہ افراد کو قتل کرنے والے 500اشتہاریوں کو گرفتار کرنے میں بے بس نظر آتی ہے۔ ان میں 200 کے قریب ایسے ہیں جو گزشتہ 5سال سے بھی زائد عرصے سے اشتہاری ہیں۔ ذرائع کے مطابق درجنوں اشتہاری ایسے ہیں جنہوں نے مدعیوں کی زندگی اجیرن کی ہوئی ہے، ان کو کیس کی پیروی کرنے اور عدالتوں میں جانے پر جان سے مارنے کی دھمکیاں دی جاتی ہیں۔ سٹی ڈویژ ن کی حدود کے متعدد تھا نو ں میں ایسے واقعات بھی پیش آ چکے ہیں جہاں قتل کے اشتہاریوں نے مدعیوں پر قاتلانہ حملے کئے اور ان حملوں میں کئی مدعی ہلاک بھی ہو چکے ہیں۔ چند ما ہ قبل مو چی گیٹ میں قتل ہو نے والے پی ٹی آئی کے ر ہنما ؤ ں خر م اورا سکے بھا ئی شہزاد کے مقد مہ کی پیر وی کر نے والے مد عی اشر ف کو بھی قتل کردیاگیا تھا جب وہ عدا لت میں پیشی پر جا ر ہا تھا ۔ ذرا ئع کی جا نب سے موصول ہونے والی دستاویزات کے مطابق سٹی ڈویڑن میں قتل کے سب سے زیادہ 52 1اشتہاری ہیں، دوسرے نمبر پر اقبال ٹاؤن ڈویژن ہے جہاں قتل کیسوں کے 94 اشتہاری آزاد گھوم رہے ہیں، تیسرے نمبر پر ماڈل ٹاؤن ڈویژن ہے جہاں 88 اشتہاری ہیں، صدر ڈویژن میں 77، سول لائن میں 49 اور کینٹ ڈویژن میں 40 اشتہاری ہیں۔ پولیس ذرائع کے مطابق قتل کیسوں کے کئی اشتہاری بیرون ملک بھی فرار ہو چکے ہیں۔ ذرا ئع کا کہنا ہے کہ مذ کو ر ہ اشتہا ریو ں کے ر ہا ئشی علاقوں میں مبینہ طو ر پر ایس ایچ اوز اور انچا رج انویسٹی گیشن لا کھو ں روپے منتھلی لیتے ہیں جو اعلی ٰ حکام تک جا تی ہے اور جب کو ئی دوسرا ایس ایچ او آتا ہے تو کا ر خا ص اس کے ساتھ بھی مک مکاکروا لیتے ہیں جس کی وجہ سے ان اشتہا ریو ں کی اپنے اپنے علااقوں میں بد معا شی قائم ہے اور ملزما ن علاقے میں قحبہ خا نہ سمیت منشیا ت فروشی اور قبضہ گرو پ کاکا م کرتے ہیں ۔ اشتہا ر یو ں کے حوالے سے ہر بنس پو ر ہ ، شاہدر ہ ، شما لی چھا ؤ نی ، غا زی آبا د ، کا ہنہ ، شفیق آبا د ، مصر ی شاہ ، سول لا ئن ، گجر پو ر ہ ، شاد با غ ، دا تا در با ر ، ڈ یفنس اے ، لٹن رو ڈ ، وحد ت کالونی، اقبا ل ٹاؤن ، سندر ، چو ہنگ ، ہنجروال وغیر ہ تھا نے شامل ہیں ۔ پو لیس حکام کا کہنا ہے کہ قتل کے مقد ما ت میں متعدد اشتہا ر ی گرفتا ر ہیں ، مو چی گیٹ میں پی ٹی آئی ر ہنما ؤ ں کے قتل میں ملو ث ملزم کو گرفتا ر کر لیا گیا ہے جبکہ د یگرکی گرفتا ر ی کے لئے ٹیمیں تشکیل دے د ی گئی ہیں۔

مزید : علاقائی