سعودی عرب،شیرخوار بچی پر تشدد میں ملوث والد گرفتار

سعودی عرب،شیرخوار بچی پر تشدد میں ملوث والد گرفتار
 سعودی عرب،شیرخوار بچی پر تشدد میں ملوث والد گرفتار

  

جدہ(مانیٹرنگ ڈیسک)سعودی عرب میں پولیس نے اپنی شیرخوار بچی کو وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنانے میں ملوث شخص کو حراست میں لے کراس کے خلاف قانونی کارروائی شروع کی ہے۔العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق حال ہی میں ویڈیو شیئرنگ ویب سائیٹ ’یوٹیوب‘ پر ایک فوٹیج سامنے آئی تھی جس میں ایک شخص کو کم سن بچی کو ایذا پہنچاتے دکھایا گیا تھا۔بچی کی والدہ بھی سامنے آئی ہیں اور انہوں نے اس حوالے سے ‘العربیہ‘ سے تفصیلی بات کی ہے۔ والدہ جو شامی شہریت رکھتی ہیں کا کہنا ہے کہ اس نے سعودی شہری سے چار سال قبل شادی کی تھی مگر اس کا شوہر اور اس کے خاندان کے دیگر افراد اس شادی سے کلی طور پر راضی نہیں تھے۔ گھر میں شوہر اور دوسرے افراد کی طرف سے بھی لڑائی جھگڑے اور مار پیٹ روز کا معمول تھی جس پر اس نے تنگ آ کر گھرکے بجائے ہوٹلوں میں رہنا شروع کردیا تھا۔ شوہر بچی کو مجھ سے لینے کے لیے بار بار مطالبہ کرنے لگا۔ میں نے طلاق کی شرط پر بچی اس کے حوالے کرنے پرآمادگی ظاہر کی تو اس نے ایک کاغذ پر طلاق لکھ دی۔ مگر گھر سے نکلنے کے بعد اس نے میرے والد سے رابطہ کیا اور کہا کہ طلاق واقع نہیں ہوئی کیونکہ اسے [شوہر] سے زبردستی طلاق لی گئی ہے۔ناریمان نے بتایا کہ بچی کی والد نے رجوع کامطالبہ کیا تو میں نے نکاح نامہ پیش کرنے کی شرط پر رضا مندی ظاہر کی تواس نے مجھے فوٹیج دکھائی جس میں بچی پر تشدد کیا جا رہا تھا۔ اس نے کہا کہ الٹی گنتی شروع ہوچکی ہے۔ یا تو تم رجوع کرو گی یا بچی کو قتل کردیا جائے گا۔

مزید : صفحہ آخر