پاک چین اقتصادری راہداری اور انڈسٹریل زونز کے قیام سے صوبہ معاشی طور پر مستحکم ہوگا:اسد قیصر

پاک چین اقتصادری راہداری اور انڈسٹریل زونز کے قیام سے صوبہ معاشی طور پر ...

پشاور( سٹاف رپورٹر)سپیکر خیبرپختونخوا اسمبلی اسد قیصرکی زیر صدارت محکمہ صنعت اور سرحد ڈویلپمنٹ اتھارٹی سے متعلق پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا اجلاس جمعرات کے روز صوبائی اسمبلی کے کانفرنس روم میں منعقد ہوا ۔اجلا س میں کمیٹی کے ممبران ایم پی اے قربان علی خان ،محمد ادریس ،محمود جان ،مفتی سید جانان اور سیکرٹری اسمبلی امان اللہ خان ،ایڈیشنل سیکرٹری پبلک اکاؤنٹس کمیٹی امجد علی ،سیکرٹری انڈسٹریزفرح حامد ،چیف ایگزیکٹیو خیبر پختونخوا اکنامک زونزڈیویلپمنٹ منیجمنٹ کمپنی محسن سعیدایڈیشنل سیکرٹری محکمہ خزانہ کے علاوہ محکمہ قانون اور صوبائی اسمبلی کے دیگر متعلقہ حکام نے بھی شرکت کی۔ اجلاس کے آغاز میں ایجنڈے کی کارروائی کو مؤخر کرتے ہوئے شرکاء نے خیبر پختونخوا اسمبلی کے سابقہ سپیکر عبدالاکبر خان جو گزشتہ روزبقضائے الٰہی انتقال کرگئے تھے کی روح کے ایصال ثواب کیلئے فاتحہ خوانی کی ۔اس موقع پر سپیکر اسد قیصر نے مرحوم کی صوبے کے عوام اور باالخصوص خیبر پختونخوا اسمبلی کیلئے ان کی خدمات کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ عبدالاکبر خان کا خیبر پختونخوا کی پارلیمانی تاریخ میں ایک اہم کردارہے جسے برسوں یاد رکھا جائے گا۔ اجلاس کی مزید کارروائی میں پاک چین اقتصادی راہداری کیلئے خیبرپختونخوا کے مجوزہ انڈسٹریل زونزرشکئی ،ڈی آئی خان ،جلوزئی اور حطار کے انفراسٹرکچر ،مواصلاتی نظام اور انڈسٹریل یونٹوں کے قیام سے متعلق تفصیلی بحث کی گئی ۔خیبر پختونخوا اکنامک زونز ڈیویلپمنٹ کے چیف ایگزیکٹیومحسن سعید اور سیکرٹری انڈسٹریزفرح حامد نے اجلاس کو آگاہ کرتے ہوئے بتایا کہ پاک چین اقتصادی راہداری کیلئے صوبے کے مجوزہ انڈسٹریل زونز مستقبل میں سرمایہ کاری کیلئے انتہائی اہمیت اختیار کر چکے ہیں ۔اجلاس کو بتایا گیا کہ کراچی اور لاہورکی بڑی اور معروف کمپنیوں سمیت بین الاقوامی کمپنیوں نے بھی مذکورہ صنعتی زونز میں بھر پو ر سرمایہ کاری میں گہری دلچسپی ظاہر کی ہے ۔حکام نے مزید بتایا کہ صوبائی حکومت پاک چین اقتصادی راہداری کے تناظرمیں ہنر مند افراد ی قوت کی تیاری کیلئے بھی بھر پور اقدامات اٹھارہی ہے تاکہ ا س اہم منصوبے سے بھر پور استفادہ حاصل کیا جاسکے ۔اس موقع پرسپیکر اسدقیصر نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاک چین اقتصادی راہداری کیلئے مجوزہ انڈسٹریل زونز کے قیام سے نہ صرف صوبہ معاشی طور مستحکم ہو گا بلکہ بے روزگاری کا خاتمہ ہوگا اور مقامی سطح پر روزگار کے بھر پور مواقع میسر آسکیں گے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر