’آج چاند بہت خوبصورت ہے، مرنے کو دل کر رہا ہے‘خودکشی کرنیوالے جاپانی انجینئر کے خط کے مندرجات سامنے آگئے

’آج چاند بہت خوبصورت ہے، مرنے کو دل کر رہا ہے‘خودکشی کرنیوالے جاپانی ...
’آج چاند بہت خوبصورت ہے، مرنے کو دل کر رہا ہے‘خودکشی کرنیوالے جاپانی انجینئر کے خط کے مندرجات سامنے آگئے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

ملتان (ویب ڈیسک) پاکستان میں آئے جاپانی انجینئر نے ہوٹل کی چھت سے کود کر خودکشی کر لی‘ دو گھنٹے تک جائے وقوعہ پر زخمی حالت میں تڑپتا رہا ‘ ساتھیوں نے ہسپتال منتقل کیا جہاں وہ چل بسا،‘ اکومورا کے کمرے سے ایک خط ملا جو جاپانی زبان میں تحریرکیا گیا‘ جس میں اکومورا نے لکھا کہ میں اُداس اور پریشان ہوں ‘ چاند کی چاندنی بہت خوبصورت لگ رہی ہے ‘ اس چاند کی روشنی میں مرنے کو دل کر رہا ہے ‘ آج خوبصورت چاند کو آخری بار دیکھ رہا ہوں ‘ پولیس نے یہ خط قبضہ میں لے لیا ہے، 11 نومبر 2016 ء کو پاکستان آنیوالا اکومورا ڈیرہ غازی خان میں جاری ایک منصوبے پر بطور انجینئر خدمات انجام دے رہا تھا ‘ 15 نومبر 2016 ء کو ہوٹل میں رہائش اختیار کی ، پولیس کا کہنا ہے کہ اس بات کی تصدیق ہو گئی ہے کہ اکومورا نے خودکشی کی ۔

بتایا جاتا ہے کہ اس ہوٹل میں مزید 16 جاپانی شہری بھی مقیم ہیں ، اکومورا اور اس کے ساتھی روزانہ صبح 6 بجے ملتان سے ڈیرہ غازی خان کیلئے روانہ ہوتے اور شام کو واپس آجاتے ،جمعرات کو جاپانی انجینئر ز تیار ہو کر گاڑی میں بیٹھ گئے مگر اکومورانہ پہنچا ، کمرے میں بھی موجود نہ تھا‘ تلاش پر وہ زخمی حالت میں ملا‘ ساتھی انجینئر ز نے پولیس کو بتایا کہ اکومورا صبح 3 بجے بیدار ہوا تھا ‘ برآمدے میں ٹہلتا رہا‘ اسے پانی پیتے ہوئے بھی دیکھا گیا ‘ خیال ہے کہ اس نے پونے 4 بجے کے قریب ہوٹل کی بالائی منزل سے چھلانگ لگائی اور تقریباً پونے 6 بجے وہ زخمی حالت میں ملا۔ ابتدائی پوسٹ مارٹم رپورٹ کے مطابق اکومورا سرپر شدید چوٹ لگنے کی وجہ سے ہلاک ہوا‘ نعش کے اجزاء تجزیہ کیلئے پنجاب فرانزک لیبارٹری لاہور بھجوا دیئے گئے ہیں۔

مزید : ملتان