’ اب ہمارے سارے راز ایران کے پاس چلے جائیں گے ‘ ڈونلڈ ٹرمپ کے امریکی صدر بننے کا ایران کو ایسا فائدہ کہ اسرائیلی فوج کی نیندیں اُڑ گئیں

’ اب ہمارے سارے راز ایران کے پاس چلے جائیں گے ‘ ڈونلڈ ٹرمپ کے امریکی صدر بننے ...
’ اب ہمارے سارے راز ایران کے پاس چلے جائیں گے ‘ ڈونلڈ ٹرمپ کے امریکی صدر بننے کا ایران کو ایسا فائدہ کہ اسرائیلی فوج کی نیندیں اُڑ گئیں

  

واشنگٹن (مانیٹرنگ ڈیسک) نومنتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی کامیابی امریکا ہی نہیں بلکہ اس کے قریبی دوست اسرائیل پر بھی بجلی بن کر گری ہے۔ دنیا کے طاقتور ترین ملک کے سب سے بڑے عہدے کے لئے ٹرمپ کا انتخاب ہوتے ہی اسرائیل کو اپنے قیمتی راز چوری ہونے کے خطرے نے گھیر لیا ہے، اور اسرائیل کے ساتھ خود امریکی خفیہ ایجنسیاں بھی اہم راز ٹرمپ کی پہنچ سے دور رکھنے کیلئے سرگرم ہو گئی ہیں۔ 

ویب سائٹ وائی نیٹ نیوز کی ایک رپورٹ کے مطابق اسرائیلی خفیہ ایجنسی نے حال ہی میں خدشے کا اظہار کیا ہے کہ ان کی جانب سے امریکی خفیہ ایجنسی کو فراہم کی جانیوالی ٹاپ سیکریٹ معلومات لیک ہو سکتی ہیں۔ اسرائیل کو خدشہ ہے کہ یہ معلومات روس اور وہاں سے اسرائیل کے سب سے بڑے دشمن ایران کے پاس پہنچنے کا خدشہ ہے۔ یہ اطلاعات ملنے کے بعد امریکی خفیہ ایجنسی خبردار ہو گئی ہے کیونکہ اسے نو منتخب صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور ان کی نئی ایڈمنسٹریشن کے متعلق پہلے ہی شکوک و شبہات ہیں۔

مزیدپڑھیں:’جانور ہوا خارج نہیں کرتے!‘ سائنسدانوں نے ایسی تحقیق شروع کردی کہ ہنگامہ برپاہوگیا

امریکی ایجنسیوں نے خود اسرائیلی خفیہ ایجنسی کو خبردار کر دیا ہے کہ نو منتخب صدر یا ان کی ایڈمنسٹریشن کے ساتھ ٹاپ سیکریٹ معلومات شیئر کرنے سے گریز کریں ۔ نومنتخب امریکی صدر اور روس کے صدر ولادی میر پیوٹن کے ساتھ خفیہ تعلق کی خبریں پہلے ہی سامنے آرہی ہیں، جبکہ تجزیہ کاروں کا یہ بھی کہنا ہے کہ روسی خفیہ ایجنسیوں کے ایرانی خفیہ ایجنسی کے ساتھ قریبی روابط ہیں۔

رپورٹ کے مطابق امریکی اور اسرائیلی خفیہ ایجنسیوں کی حال ہی میں ایک میٹنگ ہوئی جس میں امریکی خفیہ ایجنسی کے لوگوں نے اپنے نو منتخب صدر کے مشکوک رویے پر بے حد نا اُمیدی کا اظہار کیا۔ وہ اس بات پر بھی سیخ پا تھے کہ نو منتخب صدر اپنے ہی ملک کی انٹیلی جنس ایجنسیوں کے بارے میں توہین آمیز باتیں کرتے ہیں اور ان کی فراہم کردہ معلومات کو اہمیت دینے پر تیار نہیں ہیں۔

امریکی خفیہ ایجنسی NSA کے اہلکاروں نے اسرائیلیوں کوبتایا کہ انہیں اس بات کا بھی یقین ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ کو جتوانے کیلئے روس نے امریکی الیکشن ہیک کیا۔ امریکی اہلکار اس بات پر بھی پریشان نظر آئے کہ روس کے پاس ڈونلڈ ٹرمپ کی متنازع ویڈیو ز موجود ہیں جن کے ذریعے وہ انہیں بلیک میل بھی کر سکتے ہیں۔

رپورٹ میں ذرائع کے حوالے سے انکشاف کیا گیا ہے کہ امریکی خفیہ ایجنسیوں کے اہلکاروں نے اسرائیلیوں کو تاکید کی کہ 20 جنوری ( ڈونلڈ ٹرمپ کے عہدہ صدارت سنبھالنے کی تاریخ) کے بعد بے حد محتاط ہو جائیں اور کوشش کریں کہ وائٹ ہاؤس یا صدر کی انتظامیہ کو ٹاپ سیکریٹ معلومات کی خبر نہ ہونے پائے ،ورنہ یہ معلومات براستہ روس، ایران پہنچ گئیں تو امریکی خفیہ ایجنسیاں ذمہ دار نہیں ہوں گی۔

مزید : بین الاقوامی