سبزہ زار سے غیر اخلاقی فلمیں بنانے والا گروہ دھر لیا گیا ، 2خواتین سمیت 9افراد گرفتار

سبزہ زار سے غیر اخلاقی فلمیں بنانے والا گروہ دھر لیا گیا ، 2خواتین سمیت 9افراد ...
سبزہ زار سے غیر اخلاقی فلمیں بنانے والا گروہ دھر لیا گیا ، 2خواتین سمیت 9افراد گرفتار

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) سبزہ زار میں پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے غیر اخلاقی فلمیں بنانیوالے گروہ کو گرفتار کر لیاہے جن  میں2خواتین سمیت 9افراد بھی شامل ہیں، یہ فلمیں پشتون علاقوں میں بھیجی جاتی تھیں ۔ 

جعلی عدالتی آرڈر بنانے پر 2سابق پولیس کانسٹیبلز کو 12،12سال قید ،20،20ہزار روپے جرمانہ کی سزا سنا دی گئی

تفصیلات کے مطابق لاہور کے علاقے سبزہ زار میں پولیس نے چھاپہ مارکارروائی کرتے ہوئے اخلاقیات سے گری ہوئی فلمیں بنانیوالے9 رکنی گروہ کو گرفتار کرلیا جن میں  2خواتین اوردوپروڈیوسر بھی شامل ہیں۔زیر حراست ملزمان کی نشاندہی پر پولیس نے ملزمان کے قبضے سے فحش سی ڈیز،کیمرے اوردیگرآلات بھی برآمدکر لئے ہیں۔پولیس کے مطابق  گرفتار گروہ کیخلاف مقدمہ درج کرتے ہوئے پولیس نے تمام افراد کومتعلقہ تھانے منتقل کردیا ہے جہاں ملزمان سے مزید تحقیقات کی جائے گی اور نیٹ ورک میں موجود دیگر لوگوں کی مزید گرفتاریاں متوقع ہیں ، ابتدائی تفتیش کے مطابق اس گروہ میں ایک اور خاتون بھی شامل ہے جبکہ  پکڑی گئی خواتین کا کہنا ہے کہ فلمسازوں نے زبردستی فلمیں بنوائیں۔

ہنی مون مناتی نوبیاہتا دلہن چلتے چلتے ایک اجنبی ڈاکٹر سے ٹکرا گئی، اسے دیکھتے ہی ڈاکٹر نے ایسی بات کہہ دی کہ زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا ، سب خوشیاں خاک میں مل گئیں کیونکہ ۔۔۔

پولیس کا کہنا ہے کہ ملزم فحش فلمیں افغانستان اور پشاور بھجوا تے تھے، پشاور کے سینما میں بھی یہ فحش فلمیں نشر کی جاتی تھیں۔ گرفتار ہونے والی خواتین میں نشاط، گڑیا، حنا اور آرزو جبکہ مردوں میں امین، فیصل، جاسم، وقار، اویس، صابر، شاہد شیراز اور انور خان کو گرفتار کیا گیا جبکہ گروہ سے فحش سی ڈیز بھی برآمد کی گئی ہیں۔

مزید : لاہور