”بشریٰ بی بی نے اپنے خاوند کو بتایا کہ میرے خواب میں نبی کریمﷺ آئے اور کہا کہ۔۔۔“ معروف صحافی جاوید چوہدری نے اپنے کالم میں ایسا انکشاف کر دیا کہ ہنگامہ برپا ہو گیا، ہر کسی کا منہ کھلا کا کھلا رہ گیا

”بشریٰ بی بی نے اپنے خاوند کو بتایا کہ میرے خواب میں نبی کریمﷺ آئے اور کہا ...
”بشریٰ بی بی نے اپنے خاوند کو بتایا کہ میرے خواب میں نبی کریمﷺ آئے اور کہا کہ۔۔۔“ معروف صحافی جاوید چوہدری نے اپنے کالم میں ایسا انکشاف کر دیا کہ ہنگامہ برپا ہو گیا، ہر کسی کا منہ کھلا کا کھلا رہ گیا

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) چیئرمین عمران خان کی تیسری شادی کی خبریں منظرعام پر آئیں تو اندازوں اور افواہوں کا ایک نیا سلسلہ شروع ہو گیا۔ کئی خواتین کی تصاویر سوشل میڈیا پر شیئر ہوئیں جنہیں بشریٰ بی بی کہا گیا مگر سب کی ہی تردید ہو گئی اور اب تک یہ کوئی نہیں جانتا کہ وہ کیسی دکھتی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں۔۔۔”یہ عمران خان کی بیگم بشریٰ بی بی نہیں بلکہ۔۔۔“ بڑا دعویٰ سامنے آ گیا

اس معاملے کے دوران بشریٰ بی بی کی اپنے سابقہ شوہر خاور مانیکا سے طلاق لینے کا معاملہ بھی منظرعام پر آیا جس پر طرح طرح کی باتیں کی گئیں مگر سینئر صحافی و کالم نگار جاوید چوہدری نے اپنے کالم میں ایک ایسی وجہ کا بھی ذکر کیا کہ ہر کسی کی آنکھیں کھول دینے کیلئے کافی ہے، انہوں نے اپنے کالم میں کیا لکھا؟ اس کا کچھ حصہ ذیل میں ملاحظہ کیجئے۔

”جولائی 2016ء  میں یہ خبریں بھی گردش کرنے لگیں عمران خان نے بشریٰ بی بی کی بہن مریم مانیکا کے ساتھ تیسری شادی کر لی ہے تاہم مانیکا فیملی اور پی ٹی آئی نے ان خبروں کی تردید کر دی‘ عمران خان بشریٰ بی بی کی روحانیت کے کتنے قائل ہیں آپ اس کی مثال عائشہ گلا لئی کے واقعے سے لگا لیجئے‘عائشہ گلا لئی نے یکم اگست2017ءکو عمران خان پر ہراساں کرنے کا الزام لگایا‘ عمران خان الزام کے فوراً بعد3 اگست کو بشریٰ بی بی کے ساتھ پاک پتن گئے اور مزار شریف پر سلام کیا‘

بشریٰ بی بی نے خان صاحب کو تسلی بھی دی اور یہ یقین بھی دلایا ”آپ اس بحران سے صاف نکل جائیں گے“۔ عمران خان کا خیال تھا حکومت یہ ایشو اچھالے گی‘ کیس بنے گا اور حکومت انہیں صادق اور امین نہیں رہنے دے گی لیکن پیرنی کی بات درست اور خان صاحب کا خدشہ غلط ثابت ہوا‘ یہ ایشو آہستہ آہستہ دب گیا‘ یہ روحانی سلسلہ چلتا رہا لیکن اس دوران میاں بیوی کے تعلقات خراب سے خراب ہوتے چلے لگے یہاں تک کہ بیوی نے خاوند سے طلاق مانگ لی‘ طلاق کے سلسلے میں دو اطلاعات ہیں‘

پہلی اطلاع‘ بشریٰ مانیکا نے خاور فرید کو بتایا‘ مجھے نبی اکرم ﷺ کی زیارت ہوئی‘ آپ ﷺ نے مجھے حکم دیا تم خاوند سے طلاق لے کر عمران خان کے ساتھ شادی کر لو‘ شادی کے بعد عمران خان کے راستے کی تمام رکاوٹیں دور ہو جائیں گی‘ یہ وزیراعظم بن جائیں گے اور پاکستان کا سنہرا دور شروع ہو جائے گا اورخاوند نے پاکستان کے سنہرے دور کےلئے اپنی 30 سالہ رفاقت توڑ دی یوں بیگم بشریٰ مانیکا دوبارہ بشریٰ ریاض وٹو بن گئیں‘ یہ لاہور شفٹ ہوئیں اور والدہ کے ساتھ رہنے لگیں‘

عدت پوری ہوئی اور عمران خان نے انہیں رشتہ بھجوا دیا‘ دوسری اطلاع‘ بشریٰ مانیکا نے خاور فرید سے خلع لی‘ عدت پوری کی اور یکم جنوری 2018ءکو لاہور میں عمران خان کے ساتھ نکاح کر لیا‘ یہ دونوں اب اعلان کےلئے مناسب روحانی گھڑی کا انتظار کر رہے ہیں‘ خاور فرید اور پی ٹی آئی کا موقف ہے شادی ابھی نہیں ہوئی‘ خاور فرید مانیکا یہ بھی فرما رہے ہیں ہماری طلاق کی وجہ ناچاقی نہیں تھی کوئی روحانی ایشو تھا‘ ہم اس اعتراف کو خواب یا بشارت کی تصدیق سمجھ سکتے ہیں‘

یہ دونوں اطلاعات کہاں تک درست ہیں یا ان میں سے کون سی ٹھیک اور کون سی غلط ہے یہ فیصلہ وقت کرے گا تاہم یہ درست ہے عمران خان بشریٰ ریاض سے ٹھیک ٹھاک متاثر ہیں‘ یہ ان کے روحانی اثر میں بھی ہیں‘ مجھے عمران خان کے خاندان کے ایک فرد نے بتایا بشریٰ بی بی نے روحانی حساب لگا کر بتایا عمران خان کا لاہور کا آبائی گھر 2زمان پارک ان کےلئے ٹھیک نہیں‘ زمان پارک میں عمران خان کی ہمشیرہ عظمیٰ نیازی اپنے بچوں کے ساتھ رہتی تھیں‘

عمران خان نے پیرنی کے مشورے پر اپنا آبائی گھر گرا دیا‘ ان کی ہمشیرہ اب کرائے کے مکان میں رہتی ہیں‘ یہ حفیظ اللہ نیازی کی بیگم ہیں‘ ان دونوں کے درمیان علیحدگی ہے‘ 2زمان پارک اب ملبے کا ڈھیر بن چکا ہے‘ یہ اطلاعات بھی ہیں ‘ بشریٰ بی بی اور خاور فرید کا خیال تھا ریحام خان عمران خان کے سیاسی راستے میں رکاوٹ ہیں چنانچہ خان صاحب نے پیرنی کے اشارے پر یہ رکاوٹ ہٹا دی‘ یہ دونوں میاں بیوی عمران خان کےلئے رشتہ بھی تلاش کرتے رہے‘

یہ کوئی ایسی خاتون تلاش کر رہے تھے جس کی عمر چالیس اور پچاس سال کے درمیان ہو‘ جو مذہبی ہو‘ گھریلو ہو اور جو عمران خان کےلئے خوش نصیب ثابت ہو‘ یہ دو سال تک رشتہ تلاش کرتے رہے لیکن رشتہ نہ مل سکا لیکن آخر میں بشارت ہو ئی‘ روحانی رہنمائی ملی اور رشتہ قرب و جوار میں ہی مل گیا۔عمران خان بشریٰ ریاض کو رشتہ بھجوا چکے ہیں‘ اللہ کرے یہ انکار نہ کریں‘ ان کے بچے بھی راضی ہو جائیں اور سابق خاوند بھی یہ رشتہ قبول کر لیں اور یوں دنیا کی واحد اسلامی جوہری طاقت کے اگلے وزیراعظم کا گھر آباد ہو جائے‘۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس /علاقائی /پنجاب /لاہور